site
stats
عالمی خبریں

کیلی فورنیا فائرنگ میں ملوث جوڑے کا ساتھی گرفتار

کیلیفورنیا : کیلیفورنیا حملوں کے مبینہ ملزمان رضوان فاروق اور تاشفین ملک کے ساتھی کو گرفتار کرلیا گیا، ملزم امریکی شہری ہے۔

امریکی اخبار کے مطابق کیلیفورنیا حملوں میں استعمال ہونے والے اسلحہ کا مالک چوبیس سالہ ایزک مارکیز ہے، جسے ایف بی آئی نے گرفتار کرلیا ہے ۔اینرک مارکیز حملوں میں مبینہ طور پر ملوث رضوان اور تاشفین ملک کا پڑوسی ہے، اینرک نے دو ہزار گیارہ اور بارہ میں رائفل خریدیں جو بعد میں کیلیفورنیا حملوں میں استعمال ہوئیں ۔

ایف بی آئی اس بات کی تحقیق کررہی ہے کہ جب اینرک نے یہ رائفلز فاروق کے حوالے کی تھیں تو کیا اسے کیلیفورنیا حملے کی منصوبہ بندی کا علم تھا؟ تاہم اینرک مارکیز نے ایف بی آئی کو بتایا کہ رضوان فاروق اور وہ دو ہزار بارہ میں کسی حملے کے بارے میں منصوبہ بندی کررہے تھے جبکہ بعد میں ان کا ارادہ بدل گیا ۔

گرفتار کیے گئے نریق مارکیز نامی شخص پر دہشت گردی کی کارروائیوں کی سازش کرنے، اسلحے اور دھماکہ خیز مواد کی غیرقانونی خریداری کے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

کیلی فورنیا حملے میں ملوث تاشفین ملک اور رضوان فاروق کو سخت سیکورٹی میں سپرد خاک کردیا گیا.

اس سے قبل امریکی تحقیقاتی ادارے ایف بی آئی کے سربراہ جیمز کومی نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ کیلی فورنیا فائرنگ کے مبینہ حملہ آور جوڑے رضوان فاروق اور تاشفین ملک نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر انتہا پسند اقدامات کی حمایت کا کوئی ثبوت نہیں ملا، اس بارے میں گردش کرنے والی اطلاعات درست نہیں.

خیال رہے کہ 2 دسمبر کو امریکی ریاست کیلی فورنیا کے شہر سان برنارڈینو میں معذوروں کے سینٹر میں فائرنگ سے 14 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے تھے، پولیس نے واقعے میں ملوث دو مشتبہ افراد 28 سالہ رضوان فاروق اور ان کی 27 سالہ اہلیہ تاشفین ملک کو کئی گھنٹوں کے آپریشن کے بعد ہلاک کردیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top