The news is by your side.

Advertisement

پولیس سے بد تمیزی کرنے والی خاتون کو زیرِ علاج رکھنے کا فیصلہ

اسلام آباد: ڈپلومیٹک انکلیو میں پولیس کے ساتھ بد تمیزی کرنے والی خاتون ڈاکٹر شہلا کی طبیعت گرفتار ہونے کے بعد خراب ہو گئی، پولیس نے خاتون کو اسپتال منتقل کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈاکٹر شہلا کو زیرِ علاج رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، اسپتال ذرائع کا کہنا ہے کہ خاتون کل تک سی سی وارڈ میں زیرِ علاج رہیں گی، شعبۂ امراضِ قلب کے ڈاکٹروں نے خاتون کا تفصیلی طبی معائنہ کر لیا۔

خاتون شدید ذہنی دباؤ اور غنودگی کی شکار ہے، ای سی جی بھی نارمل نہیں: ذرائع

اسپتال ذرائع کے مطابق خاتون شدید ذہنی دباؤاور غنودگی کی شکار ہے، ڈاکٹروں نے ان کے مزید طبی ٹیسٹ تجویز کیے ہیں، بلڈ پریشر لیول اور ای سی جی ٹیسٹ معمول کے مطابق نہیں ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر شہلا کو سی سی یو میں آکسیجن ماسک لگا دیا گیا ہے، اور 2 خواتین پولیس اہل کار ان کی سیکورٹی پر تعینات کر دی گئی ہیں۔

قبل ازیں پولیس سے بد تمیزی کرنے والی خاتون کو طبی معائنے کے لیے پولی کلینک منتقل کیا گیا تھا، عدالت جوڈیشل ریمانڈ پر خاتون کو جیل بھیجنےکا حکم دے چکی ہے۔


اسلام آباد: ڈپلومیٹک انکلیومیں پولیس سے بدتمیزی کرنے والی خاتون گرفتار


واضح رہے گزشتہ روز ڈاکٹر شہلا نے اسلام آباد میں ڈپلومیٹک انکلیو کے اندر پولیس کو دھمکیاں دی تھیں، بعد ازاں انھیں راولپنڈی ڈی ایچ اے فیز ٹو سے گرفتار کر کے تھانہ وومن اسلام آباد منتقل کیا گیا۔

خاتون کے خلاف کارِ سرکار میں مداخلت اور نازیبا الفاظ استعمال کرنے کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں