The news is by your side.

Advertisement

کرونا وبا سے ایئر لائنز کو مزید کتنا خسارہ ہوگا؟ عالمی تنظیم نے خبردار کردیا

دبئی: انٹرنیشنل ایئر ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن (آئی اے ٹی اے) نے پیش گوئی کی ہے کہ دنیا بھر کی ایئر لائنز کو سال دو ہزار اکیس اور بائیس میں بھی مزید خسارے کا سامنا رہے گا۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق آئی اے ٹی اے کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ دنیا بھر کی ایئر لائنز کو دو ہزار اکیس میں 51 ارب 80 کروڑ خسارے کا سامنا رہے گا جبکہ دوہزار بائیس میں مزید 11 ارب 60 کروڑ کا نقصان اٹھائیں گی۔

آئی اے ٹی اے نے کہا کہ دوہزار بائیس میں نو ارب 20 کروڑ ڈالر کے نقصان کے ساتھ یورپ میں خطرہ موجود رہے گا جبکہ 2021 میں متوقع 20 ارب 90 کروڑ ڈالر کا نقصان ہوگا۔

اس سے قبل بھی آئی اے ٹی اے نے دوہزار بیس کے خسارے کا تخمینہ 126 ارب 40 کروڑ سے بڑھا کر 137 ارب 70 کروڑ ڈالر کر دیا تھا۔

آئی اے ٹی اے کے ڈائریکٹر جنرل ولی والش نے کہا کہ اگرچہ ایئر لائنز کا شارٹ فال ’بہت زیادہ‘ ہے لیکن ہم بحران کے سب سے گہرے حصے سے گزر چکے ہیں، ایئر لائنز نے اپنے اخراجات میں کمی کی ہے اور فضائی مال برداری کی بڑھتی ہوئی طلب کا فائدہ اٹھایا ہے۔

آئی اے ٹی اے نے پیش گوئی کی ہے کہ دوہزار بائیس میں مسافروں کی کل تعداد تین ارب 40 کروڑ ہے جو دوہزار چودہ کے برابر ہے لیکن دو ہزار انیس کی تعداد چار ارب 50 کروڑ سے کم ہے۔

والش نے مزید کہا عالمی وبا کرونا کے باوجود لوگوں نے سفر کرنے کی خواہش ختم نہیں کی ہے جیسا کہ ہم ڈومیسٹک مارکیٹ میں دیکھ رہے ہیں لیکن انہوں نے عالمی اسفار کے لیے خود کو محدود کر رکھا ہے، حکومتوں کو اس بحران سے نکلنے کے لیے ویکسینیشن مکمل کرنا ہو گی۔

آئی اے ٹی اے نے کہا کہ ’عالمی رابطہ بحال کرنا‘ حکومتوں کی ترجیح ہونی چاہیے، ہم اس بات سے پوری طرح متفق ہیں کہ ویکسین لگائے گئے لوگوں کو کسی بھی طرح ان کی نقل و حرکت کی آزادی محدود نہیں ہونی چاہیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں