The news is by your side.

منکڈ رن آؤٹ معاملہ: بین اسٹوکس نے ہرشا بھوگلے کو آئینہ دکھا دیا

منکڈ آؤٹ کے معاملے پر انگلش آل راؤنڈر اور بھارتی کمنٹیٹر ہرشا بھوگلے آمنے سامنے آگئے۔

تفصیلات کے مطابق انگلینڈ، انڈیا ویمنز ٹیم کے درمیان تیسرے ون ڈے میچ میں منکڈ رن آؤٹ کے بعد سے سوشل میڈیا پر محاذ گرم ہے، ایک ہفتہ گزرنے کے باوجود دونوں ٹیموں کے سابق و موجودہ کھلاڑی اپنے اپنے کھلاڑیوں کا دفاع کرنے میں مصروف ہیں۔

ایسا ہی معاملہ گذشتہ روز سامنے آیا جب بھارت کے معروف کمنٹیٹر ہرشا بھوگلے اور انگلش آل راؤنڈر بین اسٹوکس سوشل میڈیا پر آمنے سامنے ہوئے، معاملہ اس وقت شروع ہوا جب بین اسٹوکس نے ہرشا بھوگلے کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ‘منکڈ ‘ کے معاملے پر اپنے لوگوں میں ہم آہنگی پیدا کرے۔

جس پر ہرشا بھوگلے نے ترکی بہ ترکی جواب دیا کہ یہ ایک ثقافتی چیز ہے، انگریزوں کا خیال تھا کہ ایسا کرنا غلط ہے، چونکہ وہ کرکٹ کی دنیا کے ایک بڑے حصے پر حکمرانی کرتے تھے، انہوں نے دنیا کو بتایا کہ یہ غلط عمل ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ’مجھے نہیں لگتا ’منکڈ‘ کبھی کروں گا

بھارتی کمنٹیٹر کا کہنا تھا کہ نو آبادیاتی تسلط اتنا طاقتور تھا کہ بہت کم لوگ اس پر سوال اٹھاتے تھے، نتیجے کے طور پران کی ذہنیت اب بھی وہی ہے جو انگلینڈ غلط سمجھتا ہے، پوری دنیا بھی اسے غلط تصور کرے۔

ہرش بھوگلے کا مزید کہنا تھا کہ میں دیپتی کی جانب اچھالے گئے معاملے سے پریشان رہتا ہوں، اس نے کھیل کے قوانین کے مطابق کھیلا اور جو کچھ اس نے کیا اس پر ہونے والی تنقید کو روکنا ہوگا۔

بھارتی کمنٹیٹر کے جواب میں بین اسٹوکس کا کہنا تھا کہ دو ہزار انیس کے ورلڈکپ فائنل کو گزرے دو سال ہوچکے، مجھے آج تک ہندوستانی شائقین کی جانب سے ملنے والے پیغامات یاد ہیں ، مجھے لگتا ہے کہ شاید وہ اب آپ کو پریشان کرتے ہیں؟

Comments

یہ بھی پڑھیں