The news is by your side.

Advertisement

انسانیت سوز واقعہ: کمسن بچی مبینہ زیادتی کے بعد قتل

بھلوال: صوبہ پنجاب کے ضلع سرگودھا میں سفاکیت کا ایک اور واقعہ پیش آیا ہے، جہاں بااثر زمیندار نے مبینہ طور پر زیادتی کے بعد آٹھ سالہ بچی کو قتل کردیا ہے۔

پولیس کے مطابق انسانیت سوز واقعہ تحصیل بھلوال کے نواحی قصبے للیانی میں پیش آیا، پولیس کا کہنا ہے کہ بااثر زمیندار نےآٹھ سالہ بچی کو مبینہ زیادتی کے بعد قتل کیا ، واقعے کے بعد پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر بچی کی لاش کو تحویل میں لیتے ہوئے پوسٹ مارٹم کیلئے سول اسپتال منتقل کردیا۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب نے سرگودھا کے نواحی علاقے میں آٹھ سالہ بچی سے زیادتی اور قتل کے واقعےکا نوٹس لیتے ہوئے آرپی او سرگودھا سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔

اپنی بیان میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے واقعے میں ملوث ملزمان کی جلد گرفتاری کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ سفاک واقعے میں ملوث ملزمان کو جلد سےجلد قانون کی گرفت میں لایاجائے، پنجا حکومت متاثرہ خاندان کو ہر قیمت پر انصاف فراہم کرے گی۔اس سے قبل گیارہ نومبر کو پنجاب کے ضلع گوجرانوالہ میں دوستی کرنے والے سفاک نوجوان نے پانچ ساتھیوں کے ساتھ مل کر لڑکی کو مبینہ طور پر اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق گوجرانوالہ کے علاقے صدیق کالونی کی رہائشی لڑکی اپنے دوست کے بلانے پر اُس کے گاؤں گئی جس کے بعد ملزم طیب نے پانچ ساتھیوں سمیت لڑکی کو زبردستی اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

یہ بھی پڑھیں:  کشمور میں ماں اور کمسن بچی سے اجتماعی زیادتی

متاثرہ لڑکی نے اپنے ساتھ پیش آنے والے واقعے کی رپورٹ تھانہ نوشہرہ ورکاں میں درج کرائی جس کے بعد پولیس نے واقعے میں ملوث ملزمان کو حراست میں لے لیا۔

پولیس حکام کے مطابق لڑکی کو طبی معائنے کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا، میڈیکل رپورٹ آنے کے بعد ملزمان کے خلاف مزید قانونی کارروائی کی جائے گی۔قانونی اور سماجی مسائل کے پیش نظر لڑکی کی شناخت کو تاحال ظاہر نہیں کیا۔

یاد رہے کہ گوجرانولہ میں دو ماہ قبل بھی زیادتی کے متعدد واقعات پیش آئے تھے، ایک واقعے میں مسلح شخص نے گھر میں داخل ہوکر خاتون کے ساتھ اسلحے کے زور پر زبردستی زیادتی کی کوشش کی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں