The news is by your side.

Advertisement

ایک قانون نہیں ہوگا تو کرپشن کے ناسور کا خاتمہ نہیں کرسکیں گے، بلاول بھٹو

پشاور: پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ جب تک ایک قانون نہیں ہوگا کرپشن کے ناسور کا خاتمہ نہیں کرسکیں گے۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے پشاور میں پی ڈی ایم کے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جب تک گڈ کرپٹ بیڈ کرپٹ کھیلتے رہیں گے تو کرپشن کا خاتمہ نہیں ہوسکتا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام فیصلہ کریں گے کہ ملک کی خارجہ پالیسی کیسے چلے گی، حکومت نے معیشت کے ساتھ جو کیا وہ سب کے سامنے ہے، اس حکومت میں تاریخی بے روزگاری اور مہنگائی ہے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ تیل آٹے اور چینی کے بعد گیس کا بحران بھی آگیا ہے، ایف بی آر کی وجہ سے کے پی کو 162 ارب روپے نہیں دئیے گئے، سوچیں اس 162 ارب روپے کی وجہ سے صوبے کو کیا کیا دیا جاسکتا تھا۔

چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا کہ یہ وہی لوگ ہیں جو سی پیک کے متبادل روٹ کی بات کرتے تھے، جب سے یہ لوگ حکومت میں آئے ہیں متبادل روٹ پر کام نہیں کیا جارہا۔

انہوں نے کہا کہ خیبرپختونخوا کو معدنی وسائل کی رائلٹی نہیں دی جاتی، آپ کو ہائیڈل پاور، گیس اور تیل پر رائلٹی نہیں ملتی، غریب کی پہنچ سے چکن تو دور ہے اب تو انہیں انڈا بھی دستیاب نہیں۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ موجودہ حکومت کے دور میں کرپشن میں اضافہ ہوا، نیب کو نظر نہیں آتا کہ مالم جبہ میں کیا کیا کرپشن کی گئی، عوام نیب سے بھی حساب لیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں