The news is by your side.

Advertisement

دو بلیک ہولز کا خطرناک تصادم، زمین کا مستقبل کیا ہے؟

کائنات میں اربوں نوری سال کے فاصلے پر دو بلیک ہولز کا خطرناک ٹکراؤ اور تصادم جاری ہے، ماہرین کے مطابق کچھ عرصے میں یہ دونوں بلیک ہولز مل کر ایک بڑا بلیک ہول بنا لیں گے۔

تقریباً 10 ارب نوری سال کے فاصلے پر دو انتہائی بڑے بلیک ہولز ایک مدار میں اتنا کس کر پھنس گئے ہیں کہ وہ ایک دوسرے سے ٹکرانے کے بعد 10 ہزار سال کے مختصر عرصے میں ایک بڑا بلیک ہول بنا لیں گے۔

ان کے درمیان مداری فاصلہ 0.03 نوری سال کا ہے جو سورج اور پلوٹو کے درمیان اوسط فاصلے سے تقریباً 50 گنا زیادہ ہے۔

تاہم، دونوں اس رفتار سے حرکت کر رہے ہیں کہ ان کو بائنری مدار مکمل کرنے کے لیے دو سال لگتے ہیں اور پلوٹو کے حساب سے 248 سال۔

بائنری سسٹم وہ نظام ہوتا ہے جس میں دو سیارے ایک مرکز کے گرد گھوم رہے ہوتے ہیں، سپر میسِو بلیک ہول بائنریز کا ماہرین فلکیات کی توجہ کا مرکز ہونے کی متعدد وجوہات ہیں۔

سپر میسو بلیک ہولز اکثر کہکشاؤں کے مرکز میں پائے جاتے ہیں، وہ مرکز جس کے گرد ہر چیز گھومتی ہے۔ جب دو بلیک ہول ایک ساتھ دیکھے جاتے ہیں تو اس کا مطلب ہوتا ہے کہ دو کہکشائیں قریب آ چکی ہیں۔

ہم جانتے ہیں کہ یہ عمل ہوتا ہے لہٰذا سپر میسو بلیک ہول بائنری کی تلاش ہمیں بتا سکتی ہے کہ حتمی مراحل میں یہ کیسا لگتا ہے۔ سپر میسو بلیک ہول بائنریز ہمیں یہ بھی بتا سکتے ہیں کہ کیسے یہ دیو ہیکل اشیا اتنی بڑی ہو سکتی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں