The news is by your side.

بریگزٹ پلان سے یورپی تارکین وطن کی آمد رک جائے گی، تھریسامے

لندن: برطانوی وزیراعظم تھریسامے نے کہا ہے کہ بریگزٹ پلان سے یورپی تارکین وطن کی آمد کا سلسلہ رک جائےگا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق برطانوی وزیراعظم تھریسامے نے کہا ہے کہ بریگزٹ پلان سے یورپی تارکین وطن کی غیرضروری آمد کا سلسلہ رک جائے گا اور صرف ہنرمندی کی بنیاد پر ہی تارکین وطن کی آمد ممکن ہوسکے گی۔

برطانوی وزیراعظم نے کہا کہ یورپی انجینئرز کو سڈنی کے انجینئرز یا دہلی کے سافٹ ویئر ڈیولپرز پر فوقیت حاصل نہیں رہے گی۔

دوسری جانب یورپی یونین کے 27 ارکان برسلز میں اپنے اجلاس میں برطانیہ کے ساتھ مستقبل کے تعلقات کے حوالے سے اعلامیے پر کام کررہے ہیں۔

برطانیہ کی یورپی یونین سے علیحدگی کے حوالے سے ہونے والے معاہدے پر شدید تنقید کا سلسلہ جاری ہے، جس میں برطانیہ اور یورپی یونین کے مستقبل کے تعلقات کی سطح کا تعین کیا جائے گا۔

اس بات پر بھی قیاس آرائیوں کا سلسلہ جاری ہے کہ تھریسامے کے خلاف عدم اعتماد کی درخواستوں کی تعداد 48 تک پہنچ سکے گی یا نہیں کیونکہ عدم اعتماد کی تحریک کے لیے مطلوبہ 48 ارکان کی حمایت ضروری ہے۔

مزید پڑھیں: حکومت گری تو بریگزٹ کا عمل رک جائے گا، برطانوی وزیراعظم

واضح رہے کہ تھریسامے نے گزشتہ روز تاجر رہنماؤں کو یقین دلایا ہے کہ ان کے پلان سے منصفانہ مائیگریشن سسٹم وجود میں آئے گا جس سے برطانیہ کے نوجوانوں کو ملازمتوں کے بہتر اور وافر مواقع میسر آئیں گے۔

یاد رہے کہ برطانوی وزیر اعظم پر ٹوری پارٹی کے ممبران کی جانب سے دباؤ ڈالا جا رہا ہے کہ وہ اس ڈیل میں تبدیلیاں لے کرآئیں ، بعض کی جانب سے یہ بھی کہا جارہا ہے کہ اس ڈیل سے بہتر تھا کہ کوئی ڈیل نہ ہوتی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں