حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق نظر بند، نماز کے بعد احتجاج کی اپیل -
The news is by your side.

Advertisement

حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق نظر بند، نماز کے بعد احتجاج کی اپیل

سرینگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ظالمانہ کارروائیوں کے خلاف نماز جمعہ کے بعد مظاہرے کیے جائیں گے۔ کشمیر کی کٹھ پتلی انتظامیہ نے حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق کو نظر بند کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں آسیہ اندرابی کی حراست اور بھارتی فورسز کے مظالم کے خلاف احتجاج میں شدت آگئی۔

حریت رہنماؤں کی اپیل پر مقبوضہ وادی میں نماز جمعہ کے بعد احتجاجی ریلیاں نکالی جائیں گی۔

کٹھ پتلی حکومت نے حریت رہنما میر واعظ عمر فاروق کو احتجاج میں شرکت سے روکنے کے لیے انہیں گھر میں نظر بند کر دیا۔

بھارتی فورسز کا مختلف علاقوں میں گھر گھر تلاشی اور بلا جواز گرفتاریوں کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

تلاشی کے دوران بھارتی فورسز کے تشدد سے متعدد افراد زخمی بھی ہوئے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں