The news is by your side.

Advertisement

کینیڈین وزیرِاعظم کا ملک میں ایمرجنسی کے نفاذ کا اعلان

اوٹاوا : کینیڈین وزیرِ اعظم نے ملک میں ایمرجنسی لگانے کا عندیہ دے دیا اور کہا ایمرجنسی مختصر مدت کے لیے نافذ کی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق کینیڈین وزیرِ اعظم جسٹن ٹروڈو نے دارالحکومت اوٹاوا سمیت ملک بھر میں کورونا ویکسینیشن کو لازمی قرار دینے کے خلاف احتجاج کو روکنے کے لیے ہنگامی قانون نافذ کردیا۔

جسٹن ٹروڈونے ملک میں ایمرجنسی لگانے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا فوج تعینات نہیں ہوگی تاہم حکام کو مظاہرین کو گرفتار کرنے اور ٹرکوں کو قبضے میں لینے کے لیے مزید اختیارات دیے جائیں گے۔

کینیڈین وزیرِ اعظم نے مزید کہا کہ احتجاج سے معیشت کو نقصان پہنچ رہا ہے اور یہ امن عامہ کو بھی خطرے میں ڈال رہا ہے، ہم غیر قانونی اور خطرناک سرگرمیاں جاری رکھنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

دوسری جانب ایمرجسنی کے نفاز کے اعلان کے باوجود دارلحکومت اوٹاوا میں مظاہروں کا سلسلہ تاحال جاری ہے۔

واضح رہے کہ دس روز قبل کینیڈا کے دارالحکومت اوٹاوا میں کووڈ ویکسین کے خلاف ہزاروں مظاہرین سڑکوں پر آ گئے تھے، کینیڈا کے دارالحکومت اوٹاوا کے میئر نے کووڈ 19 کی بندشوں کے خلاف ٹرک ڈرائیوروں کے احتجاج کے مد نظر شہر میں ہنگامی حالت کے نفاذ کا اعلان کیا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں