تازہ ترین

سکھ رہنما ہردیپ سنگھ نجر کو کیسے قتل کیا گیا؟ سی سی ٹی وی فوٹیج منظرِ عام پر آگئی

کینیڈین براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے سکھ رہنما ہردیپ سنگھ نجر کے قتل کی ’’سی سی ٹی وی فوٹیج‘ ریلیز کردی۔

تفصیلات کے مطابق سکھ رہنما ہردیپ سنگھ نجر کے قتل کی ’’سی سی ٹی وی فوٹیج‘‘منظرِ عام پر آگئی، ویڈیو میں 2 نوجوانوں کو ہردیپ سنگھ نجر پر گولیاں چلانے کے بعد فرار ہوتے دیکھا جاسکتا ہے۔

کینیڈین براڈکاسٹنگ کارپوریشن نے جامع تحقیقات کے بعد قتل کی ’’سی سی ٹی وی فوٹیج‘‘ریلیز کی۔

سکھ رہنما گرپتونت سنگھ پنوں کا کہنا ہے کہ اب کوئی شک وشبہ نہیں رہ گیا کہ ہردیپ سنگھ کےقتل کاحکم نریندر مودی نے دیا تھا ، قتل کیلئےبھارتی خفیہ ایجنسی ’’را‘‘کے سربراہ کو ہدایت دی تھی۔

خالصتان تحریک کے اہم رہنما ہردیپ سنگھ نجر کو کینیڈا میں 18 جون 2023 کو قتل کیا گیا تھا ، ہردیپ سنگھ نجر آزاد سکھ ریاست کےقیام کے پر زور حامی تھے۔

مودی سرکار نے ہردیپ سنگھ نجرپردہشت گردی کےجھوٹےالزامات عائد کر رکھے تھے۔

ہردیپ سنگھ نجرکےقتل کےبعدکینیڈین وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے بھی بیان جاری کیا تھا، کینیڈین وزیراعظم کا کہنا تھا کہ سکھ رہنما ہردیپ سنگھ نجر کے قاتلوں کو پکڑنے کیلئے اقدامات کیےجائیں گے۔

کینیڈین وزیراعظم نےہردیپ سنگھ کےقتل میں مودی سرکارکےملوث ہونےکاانکشاف کیاتھا ، جس کے بعد جسٹن ٹروڈوکےالزامات کی تصدیق فائیوآئیزانٹیلیجنس ایجنسی نے بھی کی تھی۔

اب ’’سی سی ٹی وی فوٹیج‘‘میں بھی حقائق کھل کر سامنے آچکے ہیں کہ ہردیپ سنگھ نجرکےقتل میں بھارتی وزیراعظم نریندرمودی ملوث ہیں۔

غیر ملکی سرزمین پر بھارتی دہشت گردی پہلے بھی کئی بار ثابت ہوچکی ہے جبکہ امریکہ میں گرپتونت سنگھ پنوں پرقاتلانہ حملے میں بھی مودی سرکار کا کردار ثابت ہوچکا ہے۔

نکھل گپتانامی بھارتی ایجنٹ نے گرفتاری کے بعد خود اعتراف کیا تھا کہ اسے مودی سرکارکی جانب سےگرپتونت سنگھ پنوں کے قتل کاحکم دیا گیا تھا۔

مودی سرکاراپنی خفیہ ایجنسی’’را‘‘کیساتھ ملکردوسرےممالک میں خون کی ہولی کھیلتی رہی ہے۔

Comments

- Advertisement -