The news is by your side.

Advertisement

بڑی مچھلیوں پر قانون کے مطابق ہاتھ ڈالیں گے، چیئرمین نیب

اسلام آباد: قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا ہے کہ بڑی مچھلیوں پر قانون کے مطابق ہی ہاتھ ڈالا جائے گا، کسی کے ساتھ امتیاز نہیں برتا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق چیئرمین نیب جاوید اقبال کی زیرِ صدارت نیب ہیڈ کوارٹرز میں اجلاس کے دوران چیئرمین نے کہا ’نیب بد عنوانی میں ملوث بڑی مچھلیوں پر قانون کے مطابق ہاتھ ڈالے گا۔‘

نیب ہیڈ کوارٹرز میں منعقدہ اجلاس میں بدعنوانی میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کے لیے پالیسی کا جائزہ لیا گیا، اجلاس کے شرکا نے پالیسی پر اطمینان کا اظہار کیا۔

جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ کرپشن کے چھوٹے کیسز کے بر عکس نیب کی پالیسی یہ ہے کہ وہ بڑے اور میگا اسکینڈلز کی تحقیقات کو ترجیح دے رہا ہے۔

چیئرمین نیب نے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ نیب ملزمان کی گرفتاری کے لیے امتیازی پالیسی پریقین نہیں رکھتا، نیب کی جانب سے کی جانے والی گرفتاریاں بلا امتیاز، شواہد اور قانون کے مطابق ہوتی ہیں۔

نیب نے سابق وزیراعظم شوکت عزیزکے خلاف ریفرنس دائرکر دیا

جسٹس (ر) جاوید اقبال نے نیب کے طریقۂ کار کے حوالے سے کہا ’نیب عدالت میں ملزم پر لگائے گئے الزامات کا ثبوت پیش کرتا ہے، احتساب عدالت مزید تحقیقات کے لیے ملزم کا ریمانڈ دیتی ہے۔‘

قومی احتساب بیورو کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ نیب کی تحقیقات سائنسی ہوتی ہیں، وہ ملزم سے سائنسی بنیادوں پر تحقیقات کرتا ہے اور کرپشن کے ثبوت حاصل کرتا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں