The news is by your side.

Advertisement

چین نے امریکی نائب وزیر خارجہ کا بیان غیر ذمہ دارانہ قرار دے دیا

بیجنگ: چین نے ایلس ویلز کے پاک چین تعلقات اور سی پیک سے متعلق بیان کا نوٹس لیتے ہوئے اسے نہایت غیر ذمہ دارانہ قرار دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق چینی سفارت خانے نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ چین امریکی نائب وزیر خارجہ کے بیان کی سختی سے مخالفت کرتا ہے، ایلس ویلز کا بیان غیر ذمہ دارانہ، بے بنیاد اور پرانی طرز پر مبنی ہے۔

چینی سفارت خانے کا کہنا تھا کہ یہ بیان پاک چین تعلقات کو بدنام کرنے کی ایک بھونڈی کوشش ہے، آج (گزشتہ روز) پاک چین سفارتی تعلقات کی 69 ویں سال گرہ ہے، کو وِڈ 19 کے خلاف جنگ میں چین اور پاکستان ساتھ ہیں۔

چینی سفارت خانے کی جانب سے کہا گیا کہ چین اب تک 55 ملین امریکی ڈالر مالیت کا طبی سامان پاکستان کو مہیا کر چکا ہے، دونوں ممالک کی دوستی ایک دوسرے کے احترام اور حمایت پر مبنی ہے، ہم نے علاقائی امن کو فروغ دینے کے لیے ہمیشہ مل کر کام کیا ہے۔

ایلس ویلز کی افغان امن عمل میں تعاون پر پاکستان کے کردار کی تعریف

یاد رہے کہ گزشتہ روز امریکی نائب وزیر خارجہ جنوبی ایشیا ایلس ویلز نے پاک چین تعلقات سے ہٹ کر افغان امن عمل میں تعاون پر پاکستان کے کردار کی تعریف کرتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستان خطے کے امن و سلامتی کے لیے پرعزم ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان، امریکا کے تعلقات میں بہتری آئی ہے، طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے کے لیے زلمے خلیل زاد کو پاکستان کا بھرپور تعاون ملا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں