The news is by your side.

Advertisement

گردشی قرضہ ملکی معیشت کے لیے بڑا خطرہ بن گیا ہے: ڈاکٹر مرتضیٰ مغل

کراچی: پاکستان اکانومی واچ کے صدر ڈاکٹر مرتضیٰ مغل کا کہنا ہے کہ گردشی قرضہ ملکی معیشت کے لیے بڑا خطرہ بن گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اپنے ایک بیان میں ڈاکٹر مرتضیٰ مغٖل کا کہنا تھا کہ توانائی کے شعبے گردشی قرضہ تیرہ سو ارب روپے سے تجاوز کر کے ملکی معیشت کے لیے بڑا خطرہ بن گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سابقہ حکومتوں کی طرح اسے ٹالنے کے بجائے اسکا مستقل حل نکالا جائے، ن لیگ کے وزیر خزانہ نے اقتدار سنبھالنے کے بعد گردشی قرضہ کو ہمیشہ کے لیے دفن کرنے کا جھوٹا دعویٰ کیا۔

مرتضیٰ مغل کا کہنا تھا کہ سابق وزیرخزانہ پانچ سال میں ملکی تاریخ کا سب سے بڑا گردشی قرضہ چھوڑ کر ملک سے فرار ہو گئے۔

ان کا کہنا تھا کہ ماضی کی کئی حکومتوں نے آئی ایم ایف سے معاہدوں میں توانائی کے شعبہ میں اصلاحات کا وعدہ کیا مگر اس پر عمل درامد نہیں کیا، جس کی وجہ سے گردشی قرضہ بڑھتا چلا گیا۔

صدر پاکستان اکانومی واچ کا مزید کہنا تھا کہ موجودہ حکومت نے اقتدار میں آنے سے قبل اس کے خاتمہ کا دعویٰ کیا تھا، جس اب پورا کرنے کی ضرورت ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں