The news is by your side.

Advertisement

سرکلر ریلوے کا ٹھیکا ایف ڈبلیو او کو دے دیا ہے: شیخ رشید

کراچی: وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے آج کراچی سرکلر ریلوے منصوبے کا جائزہ لینے کے لیے شاہ لطیف اسٹیشن لیول کراسنگ کا دورہ کیا، اس موقع پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ منصوبے کا ٹھیکا فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن (ایف ڈبلیو او) کو دے دیا گیا ہے۔

شیخ رشید نے کہا کہ سرکلر ریلوے کا کام شروع ہو رہا ہے ہر 15 دن میں کراچی آیا کروں گا، کے سی آر کے فیز ون میں سٹی سے شاہ عبداللطیف تک ٹریک کلیئر کرا دیا ہے، 30 میں سے 12 کلومیٹر ٹریک کلیئر کرایا جا چکا ہے، سپریم کورٹ کا حکم ہے کہ تمام لائنز کلیئر کرائی جائیں۔

انھوں نے کہا بے دخل لوگوں کو بساناحکومت سندھ کی ذمے داری ہے، ریلوے محکمہ تو سپریم کورٹ کے فیصلے پر پورا عمل کرے گی، انھوں نے بتایا کہ منصوبے پر ساڑھے 10 ارب روپے کے اخراجات ہوں گے، 1.8 ارب روپے پہلے فیز میں خرچ کریں گے، سندھ حکومت سے رابطے میں ہیں، کے سی آر پر کوئی جھگڑا نہیں، ہر 15 دن بعد کے سی آر منصوبے کا جائزہ لینے آتا رہوں گا۔

اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ آج میں صرف سرکلر ریلوے کے لیے آیا ہوں، سیاست پر کل بات کروں گا۔

وزیر ریلویز شیخ رشید احمد نے سی ای او ریلوے نثار احمد میمن، ڈی ایس ریلوے ارشد اسلام خٹک کے ہم راہ کراچی سرکلر ریلوے کے حوالے سے شاہ لطیف اسٹیشن لیول کراسنگ نمبر 19 پر پریس کانفرنس کی۔

انھوں نے کہا کہ میں نے مچھر کالونی اور گیلانی اسٹیشن کا وزٹ کیا ہے، سرکلر ریلوے کے لیے ہم نے کوچز بنا لی ہیں، کیریج فیکٹری میں بوگیاں تیار ہو رہی ہیں جس دن کوچز تیار ہو جائیں گی ایک ماڈل کوچ کینٹ اسٹیشن پر عوام کے لیے رکھ دی جائے گی، 24 بریجز لیول کراسنگ سندھ حکومت نے بنانے ہیں اور ایف ڈبلیو او کو ٹھیکا دے دیا ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا سپریم کورٹ آف پاکستان کا سخت حکم ہے کہ ریلوے لائنز کے ساتھ تجاوزات کو ختم کیا جائے، اس لیے جو لوگ گھروں سے بے دخل ہوں گے ان کے لیے سندھ حکومت سے درخواست کریں گے کہ ان کی سیٹلمنٹ کے لیے انتظامات کیے جائیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں