شہبازشریف نےرضاکارانہ 55لاکھ کا چیک جمع کراکرمثال قائم کردی،چیف جسٹس
The news is by your side.

Advertisement

شہبازشریف نے رضاکارانہ 55لاکھ کا چیک جمع کراکر مثال قائم کردی،چیف جسٹس

اسلام آباد: دوران الیکشن ذاتی اشتہاری مہم سے متعلق کیس میں‌ شہبازشریف نے اپنی اشتہاری مہم کےعوض 55 لاکھ کا چیک عدالت میں جمع کرادیا، جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ شہباز شریف نے رضاکارانہ چیک جمع کراکر مثال قائم کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں پینچ نے دوران الیکشن ذاتی اشتہاری مہم سے متعلق کیس کی سماعت کی، دوران سماعت شہبازشریف نے اپنی اشتہاری مہم کےعوض 55 لاکھ کا چیک عدالت میں جمع کرادیا۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ شہبازشریف کا چیک ڈیم فنڈ میں جائے گا یا حکومتی خزانے میں ؟ جس پر ایڈووکیٹ شاہد حامد نے کہا چیک حکومت پنجاب کےخزانے میں جائے گا، ڈیم کے لیے ن لیگ حکومت نے 122ارب مختص کیے تھے۔

چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا رقم تو قومی خزانے سےتھی ذاتی حیثیت میں نہیں، شاہد حامد اینڈ کمپنی کی جانب سے ڈیم فنڈ میں کوئی چندہ نہیں آیا۔

جسٹس ثاقب نثار کا کہنا تھا کہ بتایا گیا سندھ اور کے پی میں بھی ذاتی اشتہاری مہم سرکاری خرچ پر چلائی گئی، پٹیشنربھی معلومات دینا چاہیے تو دے سکتا ہے، مزید کوئی معلومات ہوں تو عدالت میں جمع کرائیں۔

چیف جسٹس سپریم کورٹ نے کہا شہباز شریف نے رضاکارانہ چیک جمع کراکر مثال قائم کردی، باقی رہنمابھی اس پر عمل کریں، تاریخی کلمات کے ساتھ شہبازشریف کیخلاف نوٹس نمٹایا جاتا ہے۔

مزید پڑھیں : شہباز شریف کو سرکاری اشتہار کے پیسے قومی خزانے میں جمع کروانے کا حکم

دوران سماعت چیف سیکریٹری سندھ اور کے پی کے کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 10دن میں جواب طلب کرلیا اور سماعت 10دن کے لئے ملتوی کردی۔

یاد رہے مارچ میں چیف جسٹس نے سرکاری اشتہارات از خود نوٹس کیس میں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو سرکاری اشتہار کے 55 لاکھ روپے قومی خزانے میں جمع کروانے کا حکم دیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں