The news is by your side.

Advertisement

ڈیڑھ سال میں 5 سال کا کام کرنا ہے،مراد علی شاہ

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ امید کرتے ہیں نئی حکومت کے ہوتے ہوئے لوگوں کو ریلیف ملےگا، وقت کم ہے، ڈیڑھ سال میں 5 سال کا کام کرنا ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ پچھلی وفاقی حکومت کو غریبوں کا احساس نہیں تھا، وزیراعظم نے اپنی پہلی تقریر میں 25ہزار تنخواہ کا اعلان کیا، موجودہ وزیراعظم کا شکرگزار ہوں کہ سندھ حکومت کی 25ہزار تنخواہ کو مانا کیونکہ سندھ حکومت نے سب سے پہلے 25 ہزار کم سے کم تنخواہ کی جو اب پورے پاکستان میں ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ مہنگائی کا طوفان برپا ہے، مزدوروں کیلئے گزارا مشکل ہے، جب سندھ حکومت نے مزدور کی کم سے کم نتخواہ 25 ہزار روپے کرنے کا اعلان کیا تو صنعتکاروں نے اس کی مخالفت کی، وہ میرے پاس آئے اور کہا کہ باقی صوبوں میں تو20 سے 21 ہزار تنخواہ ہے۔

مراد علی شاہ نے مزید کہا کہ ہم نے کراچی، حیدرآباد اور دیگرشہروں میں رمضان بچت بازار شروع کیا ہے، کوشش کر رہے ہیں عوام کو بچت بازار میں آٹا 40 روپے کلو ملے، چینی 70سے75روپے فی کلو ملےگی،سندھ حکومت اشیا پر 46 کروڑ 20 لاکھ کی سبسڈی دےرہی ہے، 10سے 15دن سبسڈی دینے میں 50کروڑ روپے لگ رہے ہیں، اگر پورا سال سبسڈی دیں گے تو اندازا لگاسکتے ہیں کتنا پیسہ چاہیے ہوگا۔

وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ نوکریاں نہ ہونے سے بیروزگاری بھی بڑھ رہی ہے، ہم سب کو احساس ہے کہ لوگوں کو نوکریاں نہیں مل رہی ہیں، لوگوں کو بھرتی نہ کرنے سے حکومت بیٹھ گئی ہے، سندھ پبلک سروس کمیشن کو ایک ہفتے میں فعال کردینگے،

میہڑ آتشزدگی واقعے پر وزیراعلیٰ مراد علی شاہ نے کہا کہ گرمیوں میں آگ لگنے کے واقعات ہوتے ہیں، آتشزدگی کے آلات کو بہتر بنا رہے ہیں اور اقدامات کررہے ہیں کہ آئندہ ایسے واقعات پر فائربریگیڈ بروقت پہنچے۔
انہوں نے بتایا کہ میہڑ میں جو واقعہ پیش آیا اس کے متاثرین کو 36گھنٹے میں چیکس تقسیم ہوگئے ہیں، آتشزدگی سے جو بھی نقصان ہوا ہے اس کو سندھ حکومت پورا کریگی۔

وزیراعلیٰ نے لوڈشیڈنگ کے حوالے سے اعتراف کیا کہ کراچی میں لوڈشیڈنگ پچھلے 4 سے 5دن میں بڑھ گئی تھی جس پر کےالیکٹرک ایم ڈی کو تنبیہ کی ہے اور ایم ڈی کے الیکٹرک نے یقین دلایا ہے لائن لاسز والے علاقوں کے علاوہ لوڈشیڈنگ نہیں ہوگی۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم نے بتایا ہے لوڈشیڈنگ کا سبب یہ ہے کہ پچھلی حکومت نے فیول ہی نہیں خریدا جو کہ سابقہ حکومت کی نااہلی ہے،فیول ہی نہیں ہوگا تو پلانٹ کیسے چلیں گے۔

مراد علی شاہ نے مزید کہا کہ عمران خان کبھی کہتے ہیں عالمی سازش ہے کبھی کہتے ہیں ادارے ساتھ نہیں، سابق وزیراعظم کو ان کی نااہلی اور بےحسی کی وجہ سے آئینی طریقے سے نکالا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں