The news is by your side.

Advertisement

آرمی چیف کی امریکی سینیٹر لنزے گراہم اور جنرل ریٹائرڈ جیک کین سے ملاقات

واشنگٹن: آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی امریکی سینیٹر لنزے گراہم اور جنرل ریٹائرڈ جیک کین سے ملاقات ہوئی، ملاقات میں علاقائی سیکیورٹی اور افغانستان میں امن پر بات چیت ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی وزیر اعظم عمران خان کے ہمراہ اپنے دورہ امریکا کے دوران امریکی سینیٹر لنزے گراہم اور جنرل ریٹائرڈ جیک کین سے ملاقات ہوئی۔

آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ ملاقات میں علاقائی سیکیورٹی اور افغانستان میں امن پر بات چیت ہوئی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات میں پاک امریکا تعلقات پر بھی بات چیت ہوئی، سینیٹر گراہم نے دورہ پاکستان کی یادیں تازہ کیں جبکہ انہوں نے خطے میں سیکیورٹی پر پاکستان کے کردار کی تعریف بھی کی۔

اس موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک تعلقات کا استعمال کر کے خطے میں دیر پا استحکام لا سکتے ہیں۔

ملاقات میں آرمی چیف نے پاکستان میں بہتر سیکیورٹی صورتحال پر روشنی ڈالی اور پاکستان میں غیر ملکی سرمایہ کاری کے مواقع سے بھی آگاہ کیا۔

اپنے دورہ امریکا کے دوران اس سے قبل آرمی چیف نے امریکی محکمہ خارجہ کا دورہ کیا تھا جہاں امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے ان کی ملاقات ہوئی۔

آرمی چیف اور امریکی وزیر خارجہ کی ملاقات میں علاقائی سیکیورٹی اور افغان امن عمل پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ملاقات میں امریکی اور پاکستانی قیادت کی ملاقات کے پہلوؤں کا جائزہ لیا گیا جبکہ افغان قیادت میں افغان کنٹرولڈ حل پر بھی زور دیا گیا۔

گزشتہ روز آرمی چیف نے امریکی دفاعی ہیڈ کوارٹر پینٹا گون کا دورہ کیا تھا جہاں ان کا تاریخی استقبال ہوا اور انہیں 21 توپوں کی سلامی دی گئی۔

آرمی چیف نے امریکی قائم مقام وزیر دفاع سمیت چیف آف جوائنٹ چیفس آف اسٹاف سے ملاقات کی، اس موقع پر افغان امن عمل سمیت خطے کی سیکیورٹی صورتحال پر بات چیت کی گئی۔

انہوں نے امریکی چیف آف اسٹاف جنرل مارک اے ملی سے بھی ملاقات کی اور خطے کی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں