The news is by your side.

Advertisement

سینیٹ انتخابات کیلئے ضابطہ اخلاق جاری، الیکشن کمیشن کا بڑا فیصلہ

اسلام آباد : الیکشن کمیشن نے سینیٹ انتخابات کےلیے جاری ضابطہ اخلاق میں کہا ہے کہ کوئی عمل مذہبی تعصب اور ملکی نظریہ کے خلاف نہ ہو۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان کی جانب سے ایوان بالا کے انتخابات کےلیے ضابطہ اخلاق جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ سیاسی جماعتیں، امیدوار، ووٹرز اور الیکشن ایجنٹس مخصوص رائے کی تشہیر نہیں کریں گے اور ملکی سالمیت اور پارلیمان کی بالادستی کو ملحفوظ خاطر رکھا جائے۔

ضابطہ اخلاق کہا گیا ہے کہ کوئی عمل مذہبی تعصب اور ملکی نظریے کےخلاف نہیں ہوگا اور ایسا عمل کسی صورت قابل قبول نہیں ہوگا جس سے پارلیمان، عدالتوں اور فوج کا تقدس مجروح ہو۔

الیکشن کمیشن کی دی جانے والی ہدایات پر عمل درآمد کیا جائے گا، سیاسی جماعتیں، امیدوار، پولنگ ایجنٹس اور ووٹرز غیر قانونی سرگرمی اور کرپشن میں ملوث ہوں گے۔

ضابطہ اخلاق بتایا گیا ہے کہ صدر مملکت اور تمام صوبوں کے گورنر کسی انتخابی مہم کا حصہ نہیں بنیں گے۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان کا کہنا ہے کہ ووٹ کی تصویر بنانے والا کوئی بھی آلہ پولنگ اسٹیشن میں لانےکی اجازت نہیں ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں