The news is by your side.

Advertisement

وفاق نے سندھ کو سپلائی کیے گئے طبی سامان کی تفصیلات بیان کردیں

کراچی : پی ٹی آئی رہنما شہباز گل نے وفاقی حکومت کی جانب سے عدم تعاون کا الزام مسترد کر تے ہوئے وفاقی حکومت اور این ڈی  ایم اے کی جانب سے سندھ کو سپلائی کئے گے طبی سامان کی فہرست کی تفصیلات بیان کردیں۔

شہباز گل نے کہا کہ سندھ کے صوبائی وزرا جھوٹ بولنے سے پہلے حقائق کا مطالعہ کرلیا کریں،5لاکھ سے زائد فیس ماسک,3 لاکھ سرجیکل ماسک,30 ہزار این95 ماسک سندھ کو فراہم کئے گئے۔

ناصر حسین شاہ کی پریس کانفرنس پر اپنے در عمل کا اظہار کرتے ہوئے شہباز گل نے وفاقی حکومت کی جانب سے عدم تعاون کا الزام مسترد کر دیا اور وفاقی حکومت اور این ڈی ایم اے کی جانب سے سندھ کو سپلائی کئے گے طبی سامان کی فہرست کی تفصیلات بیان کردیں۔

اے آر وائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے شہباز گل نے کہا کہ سندھ حکومت کے وزرا مسلسل غلط بیانی کر رہے ہیں, وفاقی حکومت نے ضرورت کا مطلوبہ طبی سامان بروقت سندھ حکومت کو پہنچایا،77ہزار سے زائد ٹیسٹنگ کٹس وفاقی حکومت کی جانب سے سندھ کو دی گئیں، 5لاکھ سے زائد فیس ماسک,3 لاکھ سرجیکل ماسک,30 ہزار این 95 ماسک فراہم کئے گئے۔

انہوں نے بتایا کہ حفاظتی لباس, تھرمل گنز، پی سی آر مشینیں بھی وفاق کی جانب سے دی گئیں، ہینڈ سینیٹائیزرز, باڈی بیگز, سیفٹی باکسز, دستانے اور خصوصی گلاسز فراہم کئے گئے۔ پی ٹی آئی رہنما شہباز گل کا کہنا تھا کہ صوبائی وزرا جھوٹ بولنے سے پہلے حقائق کو مطالعہ کرلیں۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ گندم سے متعلق پلی بارگین کے10ارب وصول کرلیے گئے، وزیراعظم بھی کئی بار کہہ چکے ہیں کہ صوبے اقدامات کرنے میں آزاد ہیں، ہم بھی کئی بار کہہ چکےہیں اٹھارویں ترمیم کےبعدصوبوں کےپاس اختیارہے، سندھ میں اب تک ساڑھے22لاکھ خاندانوں میں رقم تقسیم ہوچکی ہے، وفاق اب تک سندھ میں27ارب روپے تقسیم کرچکا ہے۔

شہباز گل کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت جو چاہے کرلے ان کے ہاتھ میں عوام کاپیسہ نہیں دینگے، وفاق براہ راست عوام کا پیسہ عوام پر خرچ کرے گا، سندھ حکومت کو نہیں دے گا۔

این ڈی ایم اے سے ایک وینٹی لیٹر تک نہیں ملا، ناصر حسین شاہ 

قبل ازیں سندھ کے صوبائی وزیر ناصر حسین شاہ نے کہا تھا کہ وفاقی حکومت سندھ میں کاروباری افراد کو اکساتی ہے کہ دکانیں کھولیں جبکہ پشاور میں دکانیں کھلیں تو ان دکاندروں پر گولیاں برسائی جاتی ہیں۔

 حکومت سندھ نے ملک بھر میں کورونا وائرس پھیلنے کا ذمہ دار وفاق کو قرار دے دیا، پی پی رہنما سعید غنی کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ناصرحسین شاہ نے کہا تھا کہ وفاقی حکومت نے وائرس پھیلنے کے مقامات بنادیے ہیں، سندھ میں کاروباری افراد کو اکسایا جاتا ہے کہ دکانیں کھولیںاور پشاور میں جب لوگ دکانیں کھولتے ہیں تو ان پر گولیاں برساتے ہیں۔

صوبائی وزیر نے کہا کہ لاک ڈاؤن میں توسیع کی ڈیڈلائن وفاق نے دی تھی، ڈرانے کا الزام ہم پرلگایا جاتا ہے اگر لاک ڈاؤن اشرافیہ نے لگایا ہے تو فضائی آپریشن اور ٹرین سروس کس نے بند کی۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہماری کوششوں کو اٹھارہویں ترمیم، این ایف سی اور نیب کیسز سے جوڑ دیا جاتا ہے۔ کورونا پر وفاق نے سندھ سے تعاون نہیں کیا۔ این ڈی ایم اے سے ایک وینٹی لیٹر تک نہیں ملا صرف سولہ ہزار ماسک اور نوے ہزار حفاظتی کٹس ملی ہیں، نوے فیصد کٹس ہم نے خود درآمد کیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں