The news is by your side.

Advertisement

کروناوائرس کا خطرہ، عالمی ادارہ صحت کا پاکستان سے متعلق اہم بیان

جنیوا: عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر تیدروس کا کہنا ہے کہ کروناوائرس سے آگاہی کے لیے بعض ممالک ورکشاپ کا انعقاد کررہے ہیں، اس مہلک وائرس سے بچنے کے لیے پاکستان سمیت بعض ممالک نے داخلی علاقوں کی نگرانی کو ترجیح دی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ڈاکٹر تیدروس کا کہنا تھا کہ دنیا میں دیگر ہنگامی صورتحال کا جواب دینے کے ساتھ زیادہ توجہ ناگزیر ہے، اب تک چین نے 72528کرونا کیسز رپورٹ کئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ چین کی جانب سے 1870ہلاکتیں ڈبلیوایچ او کو رپورٹ کی گئیں، آج 1891نئے کیسز چین کی جانب سے رپورٹ کئے گئے، چین سے باہر مجموعی طور پر 25ممالک میں 804 کیس رپورٹ ہوئے۔

ووہان میں اسپتال کا سربراہ بھی کروناوائرس سے ہلاک، اموات کی تعداد 1800سے تجاوز کر گئی

ڈبلیوایچ او کے سربراہ نے بتایا کہ چین سے باہر اب تک کروناکیسز میں ہلاکتیں 3 ہوئی ہیں، 24 گھنٹے میں چین سے باہر 110نئے کیس سامنے آئے ہیں، کیسز میں سے 99 ڈائمنڈ پرنسزکروزشپ میں سامنے آئے ہیں۔

خیال رہے کہ چین میں جان لیوا وائرس سے اموات کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔ ووہان میں اسپتال کا سربراہ بھی کروناوائرس سے ہلاک ہوگیا جبکہ 3000ہیلتھ ورکرز بھی کرونا وائرس سے متاثر ہیں، وائرس سے اموات کی تعداد 1800 سے تجاوز کر گئی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں