site
stats
پاکستان

کراچی: گیارہ ماہ میں 361 افراد قتل، 28 کروڑ کے موبائل چھن گئے

کراچی: سی پی ایل سی نے رواں سال کے گیارہ ماہ کے دوران ہونے والے جرائم کے اعداد و شمار کی فہرست جاری کردی، جس کے مطابق جنوری سے نومبر تک 361 افراد کو موت کے گھاٹ اتارا گیا۔

تفصیلات کے مطابق شہرقائد میں امن و امان کے حوالے سے سی پی ایل سی نے 2017 کے ابتدائی 11 ماہ میں ہونے والے جرائم کے اعداد و شمار کی فہرست جاری کردی۔

سی پی ایل سی رپورٹ کے مطابق گیارہ ماہ کے دوران 361 افراد کو موت کے گھاٹ اتارا گیا، ڈکیتی اور راہزنی کی وارداتوں میں 28 ہزار سے زائد شہری موبائل اور قیمی اشیاء سے محروم ہوئے جن کی مالیت کا تخمینہ 28 کروڑ 8 لاکھ سے زائد بنتا ہے۔

مزید پڑھیں: ماہ مارچ: شہر قائد میں 24 افراد قتل ہوئے، سی پی ایل سی رپورٹ

رپورٹ کے مطابق گیارہ ماہ کے دوران 24 ہزار 154 شہری اپنی موٹرسائیکلوں سے ہاتھ دھو بیٹھے، موٹرسائیکل کی فی کس قیمت 40 ہزار سے 96 کروڑ 61 لاکھ کی مالیت بنتی ہے جبکہ 13 سو 31  شہری اپنی قیمتی کاروں سے محروم کردیے گئے شہری 7 لاکھ روپے ایوریج پر 93 کروڑ 17 لاکھ کی گاڑیوں سے محروم ہوئے۔

سی پی ایل سی کی رپورٹ کے مطابق اغواء برائے تاوان کے 11 واقعات رپورٹ کیے گیے، کراچی کے 61 شہریوں نے بھتہ خوری کی شکایات درج کروائیں جبکہ ڈکیتوں نے کراچی 8 بینکوں پر اپنے ہاتھ صاف کیے۔

مکمل رپورٹ دیکھیں

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top