site
stats
عالمی خبریں

امریکا کی تاریخ میں پہلی بار مسلمان ڈپٹی چیئرمین منتخب

واشنگٹن : امریکہ کی تاریخ میں پہلی بار ایک مسلمان کو ڈیموکریٹ پارٹی کی قومی کمیٹی کا ڈپٹی چیئرمین منتخب کر لیا گیا ہے۔

کیتھ ایلی سن امریکہ کے پہلے مسلمان ہیں، جن کو امریکی تاریخ میں پہلی بار کسی امریکی پارٹی اعلیٰ عہدے کیلئے منتخب کیا گیا ہے ، کیتھ ایلی سن ڈی این سی کی چیئرمین شپ کیلئے ہونے والے انتخابات میں دوسرے نمبر پر رہے۔ اور ڈیموکریٹ پارٹی کی نیشنل کمیٹی کے پہلے مسلمان ڈپٹی چیئرمین بن گئے۔

eelison

کیتھ ایلی سن کو پہلے مسلمان رکن کانگریس منتخب ہونے کا اعزاز بھی حاصل ہے۔

کیتھ ایلی سن اپنے زمانہ طالبعلمی کے دوران ہی اسلام قبول کر چکے ہیں اور ا پنی ریاست منی سوٹاکی تاریخ میں بھی ریاست کی اسمبلی کے پہلے مسلمان رکن رہ چکے ہیں اور 2007 سے امریکی ایوان نمائندگان کے رکن چلے آرہے ہیں جنہوں نےا پنے عہدے کا حلف بھی قرآن کریم اٹھا کر امریکا میں ایک نئی بحث کو جنم دیا تھا۔

انتخابی شکست کے بعد ڈیموکریٹک پارٹی کو منظم اور متحرک کرنے کیلئےڈیموکریٹک پارٹی کی نیشنل کمیٹی کے چیئرمین اور دیگر کے الیکشن 25 فروری کو اٹلانٹا میں منعقد ہوئے۔

الیکشن میں مسلمان رکن کیتھ ایلسن پارٹی کی سربراہی کا الیکشن ہار گئے، پارٹی الیکشن میں پہلی بار ہسپانوی امریکی ٹوم پیریز چیئرمین اور کیتھ ایلسن پہلے مسلمان وائس چیئرمین منتخب ہوئے۔

12

میڈیا کے مطابق ٹوم پیریز پہلے ہسپانوی نژاد امریکی ہیں جو چیئرمین اورکیتھ الیسن پہلے مسلمان ہیں جو وائس چیئرمین منتخب ہوئے ہیں۔ الیکشن نتائج کے مطابق ووٹنگ کے پہلے مرحلے میں پیریز کو213 اور الیسن کو 200ووٹ ملے، دوسرے مرحلے میں پیریز کو 235، الیسن کو 200 ووٹ ملے۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top