The news is by your side.

Advertisement

لاہور میں ڈینگی کے بڑھتے وار، پیراسیٹامول گولی نایاب

اسلام آباد : سربراہ ڈریپ ڈاکٹر عاصم نے ڈینگی کے وار بڑھتے ہی مارکیٹ سے پیرا سیٹامول گولی کی مصنوعی قلت کا نوٹس لےلیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں گزشتہ ماہ کے دوران ڈینگی وائرس کے کیسز میں تیزی سے اضافہ ہوا ہے، ملک بھر میں ڈینگی کے حملے بڑھتے ہی ناجائز منافع خوروں نے پیراسیٹامول کی مصنوعی قلت پیدا کردی۔

پیراسیٹامول کی قلت کی خبریں میڈیا کی زینت تو سربراہ ڈریپ ڈاکٹر عاصم رؤف نے مصنوعی قلت کا نوٹس لیتے ہوئے صوبائی دفاتر کو دوا کی ملک گیر دستیابی یقینی بنانے کی ہدایت جاری کردی۔

سربراہ ڈریپ کی جانب سے دوا کی مصنوعی قلت کا نوٹس لیتے ہوئے صوبائی دفاتر کو مراسلہ ارسال کیا گیا ہے جس میں ڈریپ کی فیلڈ فورس کو متحرک کرنےکی ہدایت کی گئی۔

مراسلے میں کہا گیا ہے کہ ڈینگی کیسز کے باعث پیراسیٹامول کی مانگ میں کئی گنا اضافہ ہوا ہے اور ایسے حالات میں شہریوں کیلئے پیراسیٹامول گولی کی دستیابی انتہائی ضروری ہے۔

ڈاکٹر عاصم رؤف نے اے آر وائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے پیراسیٹال کی مصنوعی قلت سے متعلق کہا کہ دوا کی مقررہ قیمت پر دستیابی کےلیے اقدامات جاری ہیں اور اس سلسلے میں پیراسیٹامول کی پیداوار بڑھانے کےلیے کمپنیز سے رابطے بھی کیے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ لاہور، اسلام آباد، پشاور، کوئٹہ، کراچی میں پیراسیٹامول دستیاب ہے جب کہ دیگر شہروں میں بھی مختلف ناموں سے دوا باآسانی دستیاب ہے۔

ڈاکٹر عاصم نے کہا کہ پیراسیٹامول کی مقررہ قیمت سے زائدپر فروخت قانونی جرم ہے ، اسی لیے مصنوعی قلت کو روکنے کےلیے ملک بھر کی ادویات مارکیٹس میں سرویلنس بڑھا دی ہے، جو بھی ناجائز منافع

Comments

یہ بھی پڑھیں