ضائع شدہ خوراک کو کام میں لایا جاسکتا ہے -
The news is by your side.

Advertisement

ضائع شدہ خوراک کو کام میں لایا جاسکتا ہے

آپ اپنے گھر میں استعمال کیے جانے والی غذائی اشیا کے چھلکے یقیناً پھینک دیتے ہوں گے۔

یہی نہیں بچ جانے والی خوراک بھی کوڑا دان کی زینت بن جاتی ہے جو ایک طرف تو خوراک کے ضیاع کی طرف اشارہ کرتی ہے تو دوسری جانب کچرے میں بھی اضافہ کرتی ہے۔

اب سبزیوں اور پھلوں کے چھلکوں کو قابل استعمال بنانے کے لیے ایک بہترین شے ایجاد کرلی گئی ہے جو ان تمام اشیا کو کھاد میں تبدیل کردیتی ہے۔

اور ہاں، اسے کسی قسم کی توانائی جیسے بجلی وغیرہ کی بھی ضرورت نہیں۔

desktop-2

ڈیسک ٹاپ ایکو سسٹم کہلایا جانے والا یہ سسٹم دراصل پلاسٹک کے ایک ڈبے پر مشتمل ہے۔

آپ اپنے گھر میں پھلوں اور سبزیوں کے چھلکے اس میں ڈال دیں، کچھ دن بعد یہ کھاد میں تبدیل ہوجائیں گے جو باغبانی میں استعمال کی جاسکتی ہے۔

پھینکی جانے والی غذائی اشیا کو کھاد میں تبدیل کرنے کے لیے نہایت قدرتی طریقہ استعمال کیا گیا ہے یعنی کیڑوں کی موجودگی۔

وہی کیڑے جو زمین پر کسی شے کو تلف کر کے اسے زمین کا حصہ بنا دیتے ہیں، وہی ہمارے پھینکے گئے کچرے کو بھی کھاد میں تبدیل کر دیں گے۔

desktop-3

ماہرین کا کہنا ہے کہ اس طرح سے گھریلو پیمانے پر کھاد تیار کر کے اسے گھر میں ہی مختلف سبزیاں اور پھل اگانے کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے جس سے کسی ایک گھر کی غذائی ضروریات پوری ہوسکتی ہیں۔

علاوہ ازیں کھاد بنانے کے لیے ڈالا جانے والا کچرا آلودگی اور گندگی میں کمی کرے گا، بعد ازاں اس کھاد سے اگائے گئے پودے درجہ حرارت میں کمی، اور ماحول پر خوشگوار اثرات مرتب کریں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں