site
stats
عالمی خبریں

سیاہ فام پر تشدد، ٹرمپ کے حامی کو عدالتی کارروائی کا سامنا

واشنگٹن : امریکی نو منتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی صدارتی مہم کے دوران ایک جیالے کے جانب سے ریلی کے دوران سیاہ فام شخص کو مکا مارنے پرعدالتی کارروائی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، خملہ آور کو متاثرہ شخص سے معافی مانگنا پڑی۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی  صدارتی مہم کے دوران شمالی کیرولائینا کے جلسے میں ایک 78 سالہ شخص نے ایک سیاہ فام لڑکے کو زوردار مکا رسید کیا تھا اورسیکورٹی اہلکاروں نے اس وقت بھی اس سیاہ فام شخص کو جلسے سے نکالا جبکہ حملہ کرنے والے کو کچھ نہ کہا تاہم اب حملہ کرنے کے الزام میں اسے عدالتی کاروائی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

حملے کے وقت جان میک گرا نامی شخص نے اسے کہا تھا کہ اگر آئندہ ٹرمپ کے جلسے میں نظر آئے تو قتل کر دیئے جاؤ گے، جبکہ میڈیا سے بات کرتے ہوئے حملہ کرنے والے یہ بھی کہا کہ ہمیں کیا معلوم یہ کون ہے یہ کوئی دہشت گرد بھی ہوسکتا ہے۔

حملہ آور کے حملے کا ہدف بننے والے جونز کا کہنا ہے کہ سیڑھیوں پر سے گزر رہا تھا کہ اچانک ایک سفید فام شخص نے مجھ پر حملہ کیا۔

اس واقعہ پر اب جان میک گرا کو حملہ کرنے کے الزام میں عدالتی کارروائی کا سامنا ہے تاہم عدالتی کارروائی کے دوران میک گرا نے جونز سے معافی مانگی اور کہا کہ وہ ٹرمپ کے جذباتی حمایتی ہیں اس اس واقعہ کا رنگ نسل یا تعصب سے کوئی تعلق نہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top