The news is by your side.

وبائی امراض میں خطرناک اضافہ، ڈاکٹر سیمی جمالی کو اہم ذمے داری مل گئیں

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس کی تشکیل نو کردی، وبائی، انفیکشیئس ڈیزیز ماہرین نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس میں شامل کرلے گئے۔

ذرائع وزارت صحت کے مطابق نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس چودہ اراکین پرمشتمل ہو گی، جس میں آزاد کشمیر، گلگت بلتستان اور صوبوں کی نمائندگی ہوگی ، ڈاکٹرسیمی جمالی کو نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس کا چیئرپرسن مقرر کیا گیا ہے، اس سے قبل نوشیروان برکی نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس کے سابق سربراہ تھے۔

ذرائع وزرات صحت کا کہنا ہے کہ وبائی، انفیکشیئس ڈیزیز ماہرین نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس میں شامل کئے گئے ہیں، ڈی جی ہیلتھ پاکستان نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس کی سیکرٹری ہوں گی جبکہ عائشہ رضا فاروق، ڈاکٹرصفدر رانا نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس کے ممبرنامزد کئے گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: کراچی میں خطرناک صورتحال: ماہرین صحت کی شہریوں سے خون کے عطیات کی اپیل

ذرائع کا کہنا ہے کہ نیشنل ہیلتھ ٹاسک فورس اعزازی طور پر خدمات انجام دےگی اور وہ وزیرصحت کو تکنیکی معاونت فراہم کرے گی۔

یاد رہے کہ گذشتہ سال اگست میں جناح پوسٹ گریجوایٹ میڈیکل سینٹر (جے پی ایم سی) کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر (ای ڈی) ڈاکٹر سیمی جمالی 33 سال تک خدمات دینے کے بعد ریٹائرڈ ہوگئیں تھیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں