The news is by your side.

Advertisement

سینیٹ الیکشن میں ووٹوں کی خریدو فروخت، الیکشن کمیشن نے ثبوت مانگ لیے

مردان: سینیٹ الیکشن میں ووٹوں کی خریدو فروخت کے معاملے پر الیکشن کمیشن نے ثبوت مانگ لیے۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی رکن صوبائی اسمبلی عبدالسلام آفریدی سے سینیٹ الیکشن میں آفر سے متعلق ثبوت مانگ لیے۔

الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ ایم پی اے عبدالسلام آفریدی سینیٹ انتخابات میں ووٹ فروخت کی آفر کے ثبوت دیں، وہ ثبوت سمیت ویجیلنس کمیٹی میں پیش ہوں۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں ایم اپی اے عبدالسلام آفریدی کو ووٹ کے لیے 8 کروڑ کی پیش کش کی گئی تھی، انہیں واٹس ایپ میسج بیرون ملک کے نمبر سے بھیجے گئے تھے۔

مزید پڑھیں: سینیٹ ووٹ کی خریداری: ’پی پی رکن نے 8 کروڑ کی پیش کش کی‘: پی ٹی آئی ایم پی اے کی تصدیق

اے آر وائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے عبدالسلام آفریدی کا کہنا تھا کہ ’مجھے سینیٹ الیکشن کے لیے خریدنے کی کوشش کی گئی‘۔

انہوں نے بتایا تھا کہ پاکستان پیپلزپارٹی کے رکن اسمبلی احمد کنڈی نے لیگی امیدوار عباس آفریدی کے گھر بلایا اور مجھے 8 کروڑ روپے کی پیش کش کی۔

عبدالسلام آفریدی کا کہنا تھا کہ ’میں نے پیش کش کو مسترد کیا تو احمد کنڈی نے بتایا کہ دو اراکین اسمبلی سے اسلام آباد میں بات چیت طے ہوگئی ہے‘۔

یہ پڑھیں: پی ٹی آئی سینیٹ کی سب سے بڑی جماعت بن گئی

یاد رہے کہ سینیٹ الیکشن میں یوسف رضا گیلانی نے حفیظ شیخ کو شکست دی تھی جبکہ تحریک انصاف 102 نشستوں کے ساتھ ایوان کی سب سے بڑی جماعت بن گئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں