The news is by your side.

Advertisement

الیکشن کمیشن کا اعظم سواتی کو ذاتی حیثیت میں‌ طلب کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد: الیکشن کمیشن آف پاکستان نے الزامات عائد کرنے کے معاملے میں وفاقی وزیر ریلوے اور تحریک انصاف کے سینئر رہنما اعظم سواتی کو ذاتی حیثیت میں طلب کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

اے آر وائی نیوز کو الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) کے ذرائع سے موصول ہونے والی اطلاع کے مطابق اعظم سواتی کو 21 اکتوبر کو الیکشن کمیشن میں ذاتی حیثیت سے طلب کرنے کا فیصلہ کیا  گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق اعظم سواتی سے توہین عدالت آرڈیننس کے تحت الزامات کا جواب طلب کیا جائے گا جبکہ اتنخابی ایکٹ کی متعلقہ شقوں کے حوالے سے بھی جواب مانگا جائے گا۔

مزید پڑھیں: وفاقی وزرا نے الیکشن کمیشن سے مہلت مانگ لی

یہ بھی پڑھیں: وفاقی وزرا کے الزامات پر الیکشن کمیشن کا اہم فیصلہ

یاد رہے کہ وفاقی وزرا فواد چوہدری اور اعظم سواتی کی جانب سے الیکشن کمیشن  پر الزامات عائد کیے گئے تھے، جس پر الیکشن کمیشن نے نوٹس لیتے ہوئے وفاقی وزرا سے 23 ستمبر تک جواب اور ثبوت طلب کیے تھے۔

الیکشن کمیشن کے نوٹس کا وقت ختم ہوا تو وفاقی وزرا نے جواب جمع نہ کرایا اور مزید ایک ماہ کا وقت مانگ لیا تھا۔

یاد رہے کہ الیکشن کمیشن نے وزرا کی جانب سے لگائے جانے والے الزامات پر نوٹس لیتے ہوئے 7 روز میں جواب طلب کیا تھا۔ اس حوالے سے الیکشن کمیشن نے دونوں وزرا کو 16 ستمبرکو فوادچوہدری اور اعظم سواتی کو نوٹس بھی جاری کیے تھے۔

واضح رہے کہ اعظم سواتی نے الیکشن کمیشن پر پیسے لینے اور فواد چوہدری نے چیف الیکشن پر نوازشریف سے رابطے کا الزام عائد کیا تھا۔ وفاقی وزرا کی جانب سے پریس کانفرنس میں عائد کیے جانے والے الزامات کو بے بنیاد اور من گھڑت قرار دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں