کون سے رکن پارلیمنٹ کے اثاثے کتنے ہیں؟ -
The news is by your side.

Advertisement

کون سے رکن پارلیمنٹ کے اثاثے کتنے ہیں؟

اسلام آباد: الیکشن کمیشن نے اراکین پارلیمنٹ کے 17-2016 کے اثاثوں کی تفصیلات جاری کر دیں، سینیٹر شیری رحمان 77 کروڑ روپے سے زائد کے اثاثوں کے ساتھ سرِ فہرست نکلیں۔

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری اراکینِ پارلیمنٹ کے اثاثوں کی تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما شیری رحمان کے اثاثے سب سے زیادہ نکلے۔

وزیرِ اعظم عمران خان کے اثاثوں کی مالیت صرف 3 کروڑ 86 لاکھ ہے۔

الیکشن کمیشن دستاویز کے مطابق مسلم لیگ ن کے حمزہ شہباز کے اثاثوں کی کل مالیت 41 کروڑ، 15 لاکھ 40 ہزار سے زائد ہے۔

حمزہ شہباز کی غیر زرعی اراضی کی مالیت 13 کروڑ 64 لاکھ سے زائد ہے، جب کہ زرعی زمینوں کی مالیت 3 کروڑ 797 سے زائد ہے، اور ان کے بینک اکاؤنٹ میں 43 لاکھ 70 ہزار سے زائد رقم موجود ہے۔

سابق وزیرِ ریلوے اور عوامی نیشنل پارٹی کے رہنما غلام احمد بلور کے اثاثوں کی کل مالیت 20 کروڑ، 97 لاکھ سے زائد ہے، جب کہ پی ٹی آئی کے وفاقی وزیرِ قانون بیرسٹر فروغ نسیم 17 کروڑ روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں۔


یہ بھی پڑھیں:  الیکشن کمیشن نے مسلم لیگ ن کے اثاثوں کی تفصیلات ظاہر کر دیں


سابق چیئرمین سینیٹ اور پی پی رہنما میاں رضا ربانی 10 کروڑ روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں، جب کہ مسلم لیگ ن کے رہنما راجہ ظفر الحق 4 کروڑ روپے کے اثاثے رکھتے ہیں۔

الیکشن کمیشن دستاویز کے مطابق وزیرِ اعظم عمران خان کے اثاثوں کی مالیت 3 کروڑ 86 لاکھ، 94 ہزار سے زائد ہے، جب کہ ن لیگ کے رہنما مشاہد اللہ خان کے پاس 3 کروڑ روپے کے اثاثے ہیں۔

پیپلز پارٹی کے رہنما ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا 3 کروڑ روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں، جب کہ مسلم لیگ ن کے برجیس طاہر کے اثاثوں کی کُل مالیت 2 کروڑ 78 لاکھ سے زائد ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں