The news is by your side.

مصر میں طالبہ کو قتل کرنے والا ملزم انجام کو پہنچ گیا

مصر میں فوجداری عدالت نے المنصورہ یونیورسٹی کی طالبہ نیرہ اشرف کے قتل کیس میں طالب علم محمد عادل کو موت کی سزا سنادی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق المنصورہ فوجداری عدالت نے گزشتہ روز سزائے موت کا فیصلہ سنایا اور کیس کی فائل مفتی اعلی کو بھجوا دی، شرعی رائے حمایت میں آنے پر محمد عادل کو قتل عمد کے الزام میں سزائے موت دی جائے گی۔

پبلک پراسیکیوٹر حمادہ الصاوی نے مصری یونیورسٹی کی طالبہ قتل کا مقدمہ واردات کے 48 گھنٹے بعد فوجداری عدالت میں پیش کردیا تھا۔

یاد رہے کہ المنصورہ یونیورسٹی کے ایک طالب علم نے شادی کی پیشکش سے انکار کرنے پر اپنی ہم جماعت کو چاقو کے وار کر کے ہلاک کر دیا تھا۔

یہ واقعہ گزشتہ پیر کو جامعہ المنصورہ کی فیکلٹی آف آرٹس کے سامنے پیش آیا تھا جہاں نوجوان نے اپنی ہم جماعت طالبہ پر چاقو سے حملہ کیا۔

عینی شاہدین کے مطابق نوجوان شعبہ آرٹ کے تیسرے سال کا طالب علم ہے اس نے طالبہ پر اس وقت حملہ کیا جب وہ اپنے گھر جانے کے لیے بس اسٹاپ کی جانب بڑھ رہی تھی۔

طالبہ کو تشویش ناک حالت میں میں اسپتال منتقل کیا گیا لیکن وہ راستے میں ہی دم توڑ گئی وہاں موجود افراد نے حملہ کرنے والے شخص کو پکڑ کا تشدد کا نشانہ بنایا اور پھر اسے پولیس کے حوالے کردیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں