The news is by your side.

سائنسدانوں نے خون کا ایک اور نیا گروپ دریافت کرلیا

مگر کیا آپ نے کبھی ’ای آر بلڈ گروپ‘ کے بارے میں سنا ہے؟ اگر نہیں تو جان لیں کہ سائنسدانوں نے خون کا ایک اور نیا گروپ دریافت کرلیا ہے۔ یہ دریافت خون کے اس گروپ کے حامل افراد کے علاج میں اہم ثابت ہوسکے گی۔

بلڈ گروپس کو جو چیز ایک دوسرے سے الگ کرتی ہے وہ اینٹی جنز ہے یعنی ایسے پروٹین یا کاربوہائیڈریٹ جو خون میں شامل ہوکر اینٹی باڈیز بنانے کا عمل تیز کرتے ہیں۔

خون کے اس نئے گروپ کو ای آر یا ایرینٹی جینز کا نام دیا گیا ہے اور جینیاتی طور پر اس کی 5 اقسام ہیں۔

برطانوی محققین نے خون کے اس نئے گروپ کو دریافت کیا جس کے لیے انہوں نے جدید ترین ڈی این اے سیکونسنگ اور جین ایڈیٹنگ ٹیکنالوجی کو استعمال کیا۔ انہوں نے خون کے اس گروپ میں پیزو ون پروٹین کو دریافت کیا۔

اس تحقیق کے نتائج جرنل بلڈ میں شائع ہوئے اور محققین کے مطابق اس دریافت سے نئے بلڈ گروپس کی شناخت کے لیے نئے ٹیسٹ تیار کرنے میں مدد مل سکے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں