The news is by your side.

Advertisement

سابق چیئرمین این آئی سی ایل ایازخان نیازی سپریم کورٹ سےگرفتار

اسلام آباد : سپریم کورٹ آف پاکستان سے این آئی سی ایل کرپشن کیس میں سابق چیئرمین ایاز خان نیازی کو گرفتار کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ نے آئی سی ایل کرپشن کیس کی، سابق چیئرمین ایاز خان نیازی عدالت میں پیش ہوئے۔

چیف جسٹس نے سماعت کے آغاز پراستفسار کیا کہ دوسرا ملزم محسن حبیب وڑائچ کہاں ہےِ؟ جس پر نیب پراسیکیوٹر نے جواب دیا کہ محسن حبیب تاحال گرفتار نہیں ہوسکا۔

نیب پراسیکیوٹر نے عدالت عظمیٰ کو بتایا کہ ایازخان نیازی ضمانت پرنہیں ہیں اور ان کے خلاف کراچی، لاہور میں مقدمات زیرسماعت ہیں۔

سپریم کورٹ نے کہا کہ ایاز خان نیب عدالت سے ضمانت پرنہیں تو گرفتار کیا جاسکتا ہے اور ان کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے اور 2 ماہ میں ٹرائل مکمل کیا جائے۔

عدالت عظمیٰ نے حکم دیا کہ این آئی سی ایل کرپشن کیس کے دوسرے کردار محسن حبیب وڑائچ کو فوری گرفتارکیا جائے۔

خیال رہے کہ ملزم ایف آئی اے مقدمات میں عدالتوں سے ضمانتوں پرتھا، مقدمات ایف آئی اے سے نیب منتقل ہونے پرضمانت غیرمؤثر ہو گئی تھی۔

یاد رہے کہ این آئی سی ایل کے سابق چیئرمین ایاز خان نیازی سمیت دیگر ملزمان پرزمینوں کی خرید وفروخت میں کروڑوں روپے کی کرپشن کا الزام ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں