The news is by your side.

Advertisement

فیس بک کو پہلی بار آسکر ایوارڈ کیوں ملا؟

فیس بک کی زیرملکیت اوکیولوس رئیلٹی ہیڈ سیٹس اور ای ایز ریسپان انٹرٹینمنٹ گیم اسٹوڈیو کی تیار کردہ مختصر دستاویزی فلم نے پہلی بار ڈاکو مینٹری شارٹ کیٹیگری کا آسکر ایوارڈ اپنے نام کرلیا۔

فیس بک کا نام سن کر ذہن میں یہی خیال آتا ہے کہ یقیناً تصاویر، ویڈیوز، ری ایکشنز، پوسٹس اور ایسی ہی لاتعداد چیزیں ہوں گی جو ہم وہاں دیکھتے ہیں۔

مگر کیا کبھی آپ یہ سوچ سکتے ہیں کہ فیس بک دنیائے فلم کا سب سے بڑا آسکر ایوارڈ جیت سکتی ہے؟جی ہاں فیس بک نے اپنا پہلا آسکر ایوارڈ جیت لیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق آسکر کی93 ویں اکیڈمی ایوارڈز کی تقریب میں فیس بک کی زیرملکیت اوکیولوس رئیلٹی ہیڈ سیٹس اور ای ایز ریسپان انٹرٹینمنٹ گیم اسٹوڈیو کی تیار کردہ مختصر دستاویزی فلم نے ڈاکومینٹری شارٹ کیٹیگری کا آسکر ایوارڈ اپنے نام کیا۔

تاریخ میں یہ پہلی بار ہے کہ جب کسی گیم انڈسٹری کے ایک پراجیکٹ نے آسکر ایوارڈ جیتا ہے۔25منٹ کی یہ فلم ‘کولیٹی’ فرنچ ریزیزٹنس کی سابق ممبر کولیٹی مارین کیتھرین کے گرد گھومتی ہے جو 74 سال میں پہلی بار جرمنی کا سفر کرتی ہیں۔

اس فلم کو دوسری عالمی جنگ کے حوالے سے تیار کی جانے والی وی آر ویڈیو گیم میڈل آف آنر کے لیے بنایا گیا تھا۔ کولیٹی نے اس کیٹیگری میں دیگر چار فلموں کو شکست دی۔

اس مختصر فلم کو انتھونی گیچینو نے تحریر کرنے کے ساتھ ڈائریکٹ بھی کیا، دلچسپ بات یہ ہے کہ فلم میں دکھائی جانے والی مرکزی کردار کی92 ویں سالگرہ بھی 25 اپریل کو تھی۔

کولیٹی مارین کیتھرین کو اپنے ماضی کی جانب سے لوٹنے کے لیے ایک طالبعلم نے تیار کیا تھا جس نے انہیں قائل کیا کہ وہ اس کیمپ میں جائے جہاں نازیوں نے ان کے بھائی کو قتل کیا تھا۔ آسکرملنے پر ایک ٹوئٹ میں فلم ساز نے ہر ایک کا شکریہ ادا کیا۔

اسی طرح ایک بلاگ میں پروڈکشن ٹیم کا کہنا تھا کہ اس کامیابی کی اصل ہیرو کولیٹی ہی ہیں جنہوں نے اپنی کہانی شیئر کی، فلم میں ہم نے دیکھا تھا کہ مزاحمت کے لیے جرات کی ضروروت ہوتی ہے، مگر کسی کے لیے اپنے تکلیف دہ ماضی میں واپس جانا اس سے بھی زیادہ مشکل کام ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں