The news is by your side.

Advertisement

کیمرہ مین پر تشدد : ن لیگ شکر منائے کہ میں وہاں موجود نہیں تھا، فیصل واوڈا

اسلام آباد : وفاقی وزیر فیصل واوڈا نے کہا ہے کہ صحافی برادری پر ن لیگ کا یہ حملہ افسوسناک ہے، ن لیگ شکر منائے کہ میں اس وقت پارلیمنٹ میں موجود نہیں تھا۔

یہ بات انہوں نے اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی، فیصل واوڈا نے واقعے کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف کے تغافل کی جتنی مذمت کریں کم ہے، ن لیگ کی جانب سے کیے گئے محض مذمتی بیان سے اس سانحے کی تلافی نہیں ہوسکتی۔

فیصل واوڈا نے کہا کہ ن لیگ کا صحافی برادری پر حملہ انتہائی افسوسناک ہے، ن لیگ کو شکر منانا چاہیے کہ میں اس وقت پارلیمنٹ میں موجود نہیں تھا، سزا دیئے بغیر ہم نواز شریف کے گارڈز کو جانے نہ دیتے، انہوں نے کہا کہ نواز شریف اور ان کے گارڈز کو واقعے پر معذرت کرنی چاہئے، کیمرہ مین کی صحت یابی تک مالی اعانت بھی ن لیگ کی ذمہ داری ہے۔

واضح رہے کہ اسمبلی کے باہر سابق وزیراعظم نوازشریف کی فوٹیج بنانے پر ان کے گارڈز نے نجی ٹی وی کیمرہ مینوں پرحملہ کردیا، سماء اور ہم نیوز کے کیمرہ مین نوازشریف کے گارڈ کے تشدد سے زخمی ہوگئے۔

نوازشریف پارلیمنٹ ہاؤس سے واپسی پر جیسے ہی گاڑی میں بیٹھے ان کے گارڈ نے کیمرہ مینوں پر تشدد شروع کر دیا، نوازشریف کے گارڈ نے زمین پر گرے سما کے کیمرہ مین واجد علی کے منہ پر اچھل کر لات ماری اور بھاگ گیا ۔

مزید پڑھیں: نواز شریف کے گارڈ کے تشدد سے کیمرہ مین بے ہوش، حکومت کی مذمت

کیمرہ مین اور رپورٹر نےگارڈ کو بھاگتے ہوئے پکڑ لیا لیکن پولیس اہلکار بچانے پہنچ گئے، بعد ازاں زخمی کیمرہ مین کو تشویشناک حالت میں طبی امداد کیلئے اسپتال منتقل کیا گیا، اس موقع پر وہاں موجود صحافی دہائی دیتے رہے لیکن نوازشریف کی گاڑی تیزی سے گزر گئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں