The news is by your side.

Advertisement

بیٹے نے باپ کو ہتھوڑی مار کر قتل کیا، پھر گرینڈر سے جسم کے ٹکڑے کر کے لاش جلا دی

کراچی: شہر قائد میں ایک شخص کے لرزہ خیز قتل کا معمہ حل ہو گیا، بیٹے کے ہاتھوں اپنے ہی باپ کے بہیمانہ قتل نے لوگوں کے دل لرزا دیے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں ایک بیٹے کے ہاتھوں باپ کے لرزہ خیز قتل کا معمہ حل ہو گیا، ایسٹ انویسٹیگیشن ون نے اندھے قتل میں ملوث بیٹے کو گرفتار کر لیا۔

ایس ایس پی انویسٹی گیشن الطاف حسین کے مطابق 21 اپریل کو سپر ہائی وے پر افغان کٹ سے ایک بیگ ملا تھا، جس میں بے دردی سے قتل ہونے والے ایک شخص کی لاش ملی تھی، جو بغیر سر اور بغیر ٹانگوں کی تھی۔

ایس ایس پی انویسٹی گیشن نے بتایا کہ بعد ازاں لاش کو سلیم خلجی کے نام سے شناخت کر لیا گیا، اور تکنیکی سہولیات کی مدد سے ملزم کی شناخت بھی حاصل کر لی گئی، معلوم ہوا کہ مقتول کو ان کے اپنے بیٹے نے جان سے مارا تھا۔

الطاف حسین کے مطابق مقتول سلیم خلجی کے بیٹے کی مشکوک چیزیں سامنے آئی تھیں، جس پر تفتیش کے لیے اسے گرفتار کیا گیا تو حیرت انگیز انکشافات سامنے آئے۔

سوتیلے بیٹے کے ہاتھوں ماں کے قتل کی تفتیش کرنے والا پولیس افسر جلاد بن گیا

بیٹے نے قتل کا اقرار کرتے ہوئے بیان دیا کہ والد گھر میں آئے دن مار پیٹ اور جھگڑا کرتے تھے، 21 اپریل کو میں نے والد کے سر پر ہتھوڑی مار کر قتل کر دیا، پھر گرینڈر کی مدد سے سر اور ٹانگیں کاٹیں، اور پھر لاش جلا کر لیاری ندی میں پھینک دی۔

قاتل بیٹے کا کہنا تھا کہ اس نے باپ کی کٹی ہوئی ٹانگیں جوبلی میں اور دھڑ سپر ہائی وے افغان کٹ کے قریب پھینک دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں