The news is by your side.

Advertisement

‏’ڈر ہے پٹرول 170 روپے فی لیٹر نہ ہو جائے‘‏

وزیراطلاعات و محنت سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ ماضی میں حکومت نےایک ہی رات25روپےقیمت بڑھا دی ‏تھی ڈر ہے کہ پٹرول کچھ ہفتےمیں170روپےفی لیٹرنہ ہو جائے۔

ایک بیان میں سعید غنی نے کہا کہ 3 ماہ پہلے پورے ملک میں پیٹرول کا بحران پیدا ہوا تھا اور اب پیٹرول پمپس ‏کی بندش یہ کوئی پھر نیا ڈرامہ ہے عوام کی توجہ ہٹانےکیلئےیہ حکومت ڈرامےکرتی ہے۔

سعیدغنی نے کہا کہ عمران نیازی اینڈکمپنی کو سندھ سےتکلیف لاحق ہے پنجاب ،خیبر پختونخواہ کے عوام کو ‏غیر معیاری آٹا فراہم کیا جارہا ہے عمران نیازی اینڈ کمپنی کی نالائقی کی وجہ سے مہنگائی بڑھی ہے۔

انہوں نے کہا کہ فخر امام ،خسرو بختیار نے گندم اور چینی ایکسپورٹ کی، ملک میں بجلی اور گیس کے بعد اب ‏پیٹرول بھی نہیں چندہ چوروں کی حکومت نےلوٹ مار کا بازار گرم کر رکھا ہے ان کو تکلیف ہے سندھ میں ‏کسانوں کو گندم مناسب قیمت پرکیوں مل رہے موجودہ حکومت نےمہنگی ایل این جی کیوں خریدی ہے۔

دوسری جانب وزیرایکسائزسندھ مکیش کمار کا کہنا ہے کہ 66 لاکھ میٹرک ٹن کی انکوائری کرائیں ایسوسی ایشن ‏کہہ رہی ہے 54روپےفی کلوایکس مل آٹا موجود ہے پنجاب میں سستا اور سندھ میں مہنگا آٹا، مائنڈڈائیورٹ نہ ‏کریں سندھ میں گندم کی کوئی شارٹیج نہیں ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں