The news is by your side.

Advertisement

وفاقی وزارت تعلیم کا کار نامہ، میٹرک کے ہزاروں طلبا کا مستقبل داؤ پر لگ گیا

اسلام آباد : وفاقی وزارت تعلیم نے میٹرک کے ہزاروں طلبا کا مستقبل داؤ پر لگا دیا ، فیڈرل بورڈ نے میٹرک نتائج میں سپلی والے بچوں کو پاس ہی نہیں کیا، جس کے باعث طالب علم شدید ذہنی اذیت کا شکار ہے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزارت تعلیم کے کار نامے نے میٹرک کے ہزاروں بچوں کا مستقبل داؤ پر لگا دیا، پہلےاعلان کیا کورونا کے باعث تعلیمی امتحان بورڈ کوئی امتحان نہیں لیں گے، وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے پریس کانفرنس میں اس بات کا اعلان بھی کیا تھا۔

وفاقی وزارت تعلیم نے فیڈرل بورڈ کو نئی امتحان پالیسی کا نوٹیفکیشن جاری کیا، نوٹیفکیشن کے مطابق میٹرک امتحانات میں امیدواروں کو بغیرامتحان پاس کیا گیا جبکہ جن بچوں کی سپلی تھی ان کیلئے نئے سرے سے امتحان دینے کا فیصلہ کیا۔

،ذرائع کا کہنا ہے کہ فیڈرل بورڈ نے میٹرک نتائج میں سپلی والے بچوں کو پاس ہی نہیں کیا گیا، سیکڑوں بچوں نے امتیازی تعلیمی پالیسی کے خلاف بورڈ میں درخواستیں دائرکردیں۔

متاثرین نے حکومت کی امتیازی پالیسی خلاف عدالت جانے کا بھی عندیہ دے دیا ہے ،میٹرک کے سپلی والے طالب علم شدید ذہنی اذیت کا شکار ہے۔

حکومت نے جانب سے کورونا کے باعث سپلی دینے والے طالبعلم کے امتحانات بھی منسوخ کئے گئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں