The news is by your side.

Advertisement

‘ آخرکار امریکا نے بھی بھارت میں مسلمانوں پر ریاستی مظالم کو تسلیم کر ہی لیا’

اسلام آباد : وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کا کہنا ہے کہ امریکانےبھی بھارت میں مسلمانوں پرریاستی مظالم کوتسلیم کرہی لیا، ریاستی سرپرستی میں مسلمانوں کیساتھ سفاکانہ سلوک قابل تشویش ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں اقلیتوں کے خلاف ریاستی سطح پر تعصب اور تشدد کی پالیسی پر امریکاکی جاری کردہ رپورٹ پر وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ امریکانےبھی بھارت میں مسلمانوں پرریاستی مظالم کوتسلیم کرہی لیا ، بھارت کے 200 ملین مسلمان ظلم وستم کاسامنا کررہے ہیں۔

شفقت محمود کا کہنا تھا کہ ریاستی سرپرستی میں مسلمانوں کیساتھ سفاکانہ سلوک قابل تشویش ہے، تعجب کی بات نہیں ،مودی پہلےگجرات میں بھی ایسا کرچکے ہیں۔

یاد رہے گذشتہ روز امریکی کمیشن برائے عالمی مذہبی آزادی نے سالانہ رپورٹ جاری کی تھی ، جس میں بھارت کو اقلیتوں کے لیے خطرناک ملک قرار دے دیا گیا تھا۔

امریکی کمیشن کی رپورٹ کے مطابق بھارت 2019 میں مذہبی آزادی کے نقشے میں تیزی سے نیچے آیا، سالانہ رپورٹ میں متنازع بھارتی شہریت بل پر شدید تنقید کی گئی۔

رپورٹ کے مطابق 2019 میں بھارت میں اقلیتوں پر حملوں میں اضافہ ہوا، بابری مسجد سے متعلق بھارتی سپریم کورٹ کے فیصلے پر بھی تنقید کی گئی جبکہ امریکی کمیشن نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کو منسوخ کرنے پر بھی تنقید کی۔

امریکی کمیشن کی رپورٹ میں پاکستان میں متعدد مثبت پیشرفتوں کا اعتراف کیا گیا اور کرتارپور راہداری کھولنے پر پاکستانی اقدامات کی تعریف کی گئی جبکہ سکھ یونیورسٹی، تعلیمی مواد پر نظرثانی کے حکومتی اقدامات کو سراہا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں