The news is by your side.

Advertisement

سفارتکاروں کے گروپ کا مقبوضہ کشمیر کا نام نہاد دورہ محض فریب ہیں، ترجمان دفتر خارجہ

اسلام آباد : ترجمان دفترخارجہ زاہد حفیظ کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر فوجی محاصرےمیں ہے اور بھارت دنیا کو گمراہ کرنے کی کوشش کررہا ہے، سفارت کاروں کے وفد کو نام نہاد دورہ کرایا گیا، اس طرح کے دورے محض فریب ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفترخارجہ زاہد حفیظ نے میڈیا بریفنگ کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نیوی کی مشق امن 2021اختتام پذیرہوگئی، امن مشقوں میں 42 ممالک نے شرکت کی۔

شاہ محمود قریشی کے دورہ مصر کے حوالے سے زاہد حفیظ کا کہنا تھا کہ وزیرخارجہ اس وقت مصرکےدورے پر ہیں، شاہ محموقریشی نے مصر کے صدر سے ملاقات کی اور مصری ہم منصب سے بھی مذاکرات کیے ہیں ، دورے کے دوران مصر کی قیادت کو نیک خواہشات کا پیغام پہنچایا اور مصر کے صدرکو مقبوضہ کشمیرکی صورتحال سے آگاہ کیا، وزیرخارجہ کے دورہ مصر سے دونوں ممالک کے تعلقات مستحکم ہوں گے۔

ترجمان نے کہا کہ مسعود فاؤنڈیشن کے صدراحمدعلی مسعود پاکستان کےدورے پر ہیں، احمدعلی مسعود نے وزیراعظم اور اسپیکرقومی اسمبلی سے ملاقات کی اور افغا ن امن عمل کے لیے پاکستان کے کردار کو سراہا۔

مقبوضہ وادی کی صورتحال سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ بھارت نے مقبوضہ کشمیر میں مظالم کاسلسلہ جاری رکھا ہوا ہے، مقبوضہ کشمیر 5 اگست 2019 سے فوجی محاصرے میں ہے اور بھارت عالمی برادری کو گمراہ کرنے کی کوششیں جاری رکھے ہوئے ہیں۔

ترجمان دفترخارجہ نے کہا کہ سفارتکاروں کے ایک اور گروپ کو مقبوضہ کشمیر کا نام نہاد دورہ کرایا گیا، اس موقع پر مقبوضہ کشمیر کےعوام نے ہڑتال کے ذریعے سفیروں کو سلام پیش کیا اور غیر قانونی بھارتی قبضے کیخلاف کشمیریوں نے حقیقی جذبات کا اظہار کیا، اس طرح کے دورے محض ایک فریب ہیں ، ایسے دوروں کا مقصد مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی سے توجہ ہٹانا ہے۔

پاک افغان تعلقات کے حوالے سے زاہد حفیظ کا کہنا تھا کہ پاکستان افغانستان کیساتھ دوطرفہ تعلقات مستحکم کرنےاور افغان تنازع کے جامع ،وسیع البنیاد، جامع سیاسی تصفیہ آسان بنانے کیلئے پُرعزم ہیں۔

انھوں نے مزید کہا کہ بھارت کی طرف سے سفارت کاروں کے گزشتہ دورے کو سخت تنقید کا سامنا رہا، بھارت نے سفارتکاروں کے سامنے ریٹائر فوجیوں کو سیب کے کاشتکار بنا کر پیش کیا، مقبوضہ کشمیرمیں آزادنقل وحمل اور ملاقاتوں کے بغیر سفیروں کا دورہ بے معنی ہے۔

دفترخارجہ کے ترجمان کا کہنا تھا کہ بھارت نے غیر ملکی سفیروں کو حریت قیادت سے ملنے نہیں دیا، حریت قیادت سےملاقاتوں سے بھی غیرملکی سفیروں کو حقیقی صورتحال کا پتہ چل جاتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں