The news is by your side.

Advertisement

کشمیریوں‌ پر ظلم، اقوام متحدہ کا اظہار تشویش، بھارتی ہائی کمشنر کی دفتر خارجہ طلبی

اسلام آباد: دفتر خارجہ نے بھارتی ہائی کمشنر کو طلب کرکے کشمیر میں ہونے والے مظالم پر احتجاج کرتے ہوئے 30 ہلاکتوں‌ کی شفاف تحقیقات کا مطالبہ کردیا اور کہا ہے کہ کشمیریوں پر بھارتی فوج کے مظالم کسی صورت قبول نہیں، دوسری جانب اقوام متحدہ نے بھی مظالم کا نوٹس لیتے ہوئے ہلاکتوں پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں مظالم پر اظہار مذمت کرتے ہوئے سیکریٹری خارجہ اعزاز چوہدری نے کہا ہے کہ کشمیر میں پرامن احتجاج کرنے والے شہریوں پر بہیمانہ تشدد اور قتل و غارت انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے،30 افراد کا قتل اور 300 سے زائد افراد کا زخمی ہونا لمحہ فکریہ ہے۔

دفتر خارجہ نے بھارتی ہائی کمشنر گوتم بمبا والا کو طلب کرتے ہوئے احتجاجی مراسلہ ان کے حوالے کردیا۔ سیکریٹری خارجہ اعزاز چوہدری نے مراسلے کے ذریعے بھارتی سے ان ہلاکتوں کی شفاف تحقیقات کا مطالبہ بھی کیا، انہوں نے کہا کہ بھارتی ریاستی تشدد کے ذریعے کشمیریوں کی آواز کو دبا نہیں سکتا۔

واضح رہے کہ حریت رہنما برہان وانی کے قتل کے خلاف مظاہروں پر قابض بھارتی افواج کی جانب سے فائرنگ کے نتیجے میں درجنوں مظاہرین شہید جبکہ سیکڑوں زخمی ہیں۔ بین الاقوامی ذرائع ابلاغ کے مطابق کرفیو کے نفاذ کے بعد گزشتہ 30 گھنٹوں کے دوران بھارتی افواج کی جانب سے بلا اشتعال فائرنگ سے 23 بے گناہ مظاہرین قتل جب کہ 300 سے زائد زخمی ہیں۔

اس حوالے سے اقوام متحدہ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کا نوٹس لیتے ہوئے ہلاکتوں پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ یومیہ بریفنگ کے دوران اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل بان کی مون نے کشمیر میں ہلاکتوں کے متعلق پوچھے گئے سوال کے جواب میں‌ کشمیر میں ہلاکتوں‌ پر تشویش کا اظہار کیا۔ ترجمان کے مطابق اس معاملے پر تفصیلی موقف جلد جاری کیا جائے گا۔

واضح رہے تازہ بھارتی جارحیت میں 30 کشمیری شہید اور تین سو سے زائد زخمی ہوچکے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں