The news is by your side.

Advertisement

بیس روپے کی خاطر حجام نے بیٹے کے سامنے باپ کو قتل کر دیا

نئی دہلی: بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی میں 20 روپے کے تنازع پر بیٹے کے سامنے باپ کو قتل کر دیا گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق واقعہ براڑی کے علاقے میں پیش آیا جہاں حجام سے چند روپوں کے تنازع پر ایک شخص کی جان لے لی گئی۔

مقتول کی شناخت 38 سالہ روپیش کے نام سے ہوئی ہے جس کی اہلیہ نے پولیس کو بیان دیا کہ شوہر کھانا چھوڑ کر حجامت بنوانے گئے تھے اور اس دوران 20 روپے کے معاملہ پر ان کا جھگڑا ہو گیا۔

اہلیہ کے بقول شوہر کے پاس 30 روپے تھے جب کہ حجام نے 50 روپے کا تقاضہ کیا، 20 روپے کو لے کر دونوں میں جھگڑا اور دکانداروں نے بدترین تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

Delhi man 'beaten to death' by barber shop owner before teenage son over  payment of Rs 20 | Cities News,The Indian Express

خاتون کا کہنا ہے کہ 13 سالہ بیٹا بازار میں خریداری کے لیے گیا ہوا تھا تو اس کی نظر والد پر پڑی جسے دکاندار بری طرح پیٹ رہے تھے، بیٹے نے گھر آ کر سب کو اطلاع دی اور گھر کے افراد موقع پر پہنچے، زخمی روپیش کو اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ دم توڑ گئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ متاثرہ فیملی کی مدعیت میں دائر مقدمے کے نامزد افراد کو ڈھونڈ نکالا گیا اور عدالت میں پیش کیا گیا جہاں ابتدائی سماعت پر عدالت نے ملزمان کو ریمانڈ پر دے دیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں