The news is by your side.

Advertisement

ڈاکٹری نسخہ کے بغیر اینٹی بائیوٹک ادویات کی فروخت پر پابندی عائد

اسلام : حکومت نے تمام میڈیکل اسٹور کو بغیر ڈاکٹری نسخہ کے اینٹی بائیوٹک ادویات کی فروخت پر پابندی عائد کردی اور کہا اینٹی بائیوٹک کا بے جا استعمال صحت کیلئے مضر ہے۔

تفصیلات کے مطابق حکومت نے صحت عامہ کی بہتری کی جانب بڑا قدم اٹھاتے ہوئے وفاقی دارالحکومت میں موجود تمام میڈیکل اسٹور کو بغیر ڈاکٹری نسخہ کے اینٹی بائیوٹک ادویات کی فروخت پر پابندی لگا دی۔

فیڈرل ڈرگ انسپکٹر کی جانب سے تمام میڈیکل سٹورز کو مراسلہ جاری کر دیا گیا ہے ، جس میں کہاگیا کہ ڈاکٹرکی پرچی کے بغیر اینٹی بائیوٹک فروخت نہ کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

مراسلہ میں کہا گیافارماسسٹ اینٹی بائیوٹک کے خریدار سے ڈاکٹر کی پرچی طلب کریں، اینٹی بائیوٹک کا بے جا استعمال صحت کیلئے مضر ہے، اینٹی بائیوٹک کے بے جااستعمال سے مدافعتی نظام متاثر ہوتاہے۔

مراسلے کے مطابق شہری اینٹی بائیوٹک کا استعمال معالج کی تجویز پر کریں۔

یاد رہے گذشتہ روز میاں عتیق کی جانب سے اینٹی بائیوٹک کے ضرورت سے زیادہ استعمال پرتحریک التوا جمع کرائی گئی تھی ، جس میں کہا گیا تھا اینٹی بائیوٹک کےزائداستعمال سےجانوں کوخطرات لاحق ہیں، جوبیمارہوتاہےاسکی خواہش ہوتی ہےجلدی ٹھیک ہوجائے۔

میاں عتیق کا کہنا تھا دنیامیں کہیں بھی اینٹی بائیوٹک کےاستعمال سےمنع کیاجاتاہے، آگاہی نہ ہونےکےباعث اینٹی بائیوٹک کااستعمال بڑھ رہا ہے، دانت کےعلاج سےلےکردیگربیماریوں تک ٹیکےلگانے پر زور ہے، خبریں عام ہیں کہ غلط انجکشن لگانےسےموت واقع ہوجاتی ہے۔

انھوں نے کہا تھا اینٹی بائیوٹک کااستعمال معمول بن چکاہے، اس کے استعمال سے قوت مدافعت متاثر ہوتی ہے، ایک موقع ایسابھی آتاہےکہ قوت مدافعت ختم ہوجاتی ہے۔

میاں عتیق کا کہنا تھا وزیر اعظم کی کاوشوں سے380ادویات کی قیمتیں کم کردی گئیں، وزیر اعظم کےشکرگزارہیں اب دوائیں کم نرخوں پردستیاب ہیں، کابینہ کےاجلاسوں میں ہیلتھ ریگولیٹری کامعاملہ بھی اٹھایا جائے، ہیلتھ ریگولیٹری کو صوبوں کی سطح پر بھی موثر بنایا جائے، اینٹی بائیوٹک کااستعمال روکنےکےلیےموثرقانون سازی کرناہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں