The news is by your side.

Advertisement

دہشت گردی: چیئرمین سینیٹ نے حکومت سے ان کیمرا بریفنگ مانگ لی

اسلام آباد: چیئرمین سینیٹ نے دہشت گردی کے واقعات پر حکومت سے ان کیمرا بریفنگ مانگ لی اور سینیٹ کے اجلاس میں بریفنگ دینے والے وزیر مملکت بلیغ الرحمان کو جواب دیا ہے کہ وہ اخباری تراشے نہ سنائیں ایوان کو اعتماد میں لیں۔

سینیٹ کا اجلاس چیئرمین سینیٹ رضا ربانی کی زیر صدارت منعقد ہوا جس میں ملکی سیکیورٹی صورتحال پر وزیر مملکت بلیغ الرحمان نے ایوان کو بریفنگ دی۔

انہوں نے کہا کہ لاہور دھماکے کی ذمہ دار کالعدم تنظیم افغانستان میں موجود ہے، وہ افغان صوبے لال پور، ننگرہار سے اپنا نیٹ ورک چلارہی ہے، حکومت دہشت گردی کی روک تھام میں سنجیدہ ہے،لاہور دھماکے کی پیشگی اطلاعات موجود تھیں اس لیے دہشت گرد زیادہ نقصان نہیں پہنچا سکے۔

انہوں نے کہا کہ کوئٹہ میں بی ڈی ایس اہلکار بم ناکارہ بناتے ہوئے شہید ہوئے جن کی شہادت کی تحقیقات جاری ہیں، پشاور حیات آباد دھماکے کی تفصیلات بتاتے ہوئے بلیغ الرحمان نے کہا کہ خود کش حملہ آر پشاور کے علاقے میں ججز کی گاڑی سے ٹکرایا جبکہ مہمند ایجنسی میں افسوسناک واقعہ پیش آیا۔

وزیرمملکت نے کہا کہ حکومت دہشت گردی کی روک تھام کے لیے کوشاں ہے اس لیے ہم نے افغانستان سے احتجاج کیا ہے کہ وہ اپنی زمین دہشت گردی کے استعمال کرنے کی اجازت نہ دے۔

بلیغ الرحمان کی بریفننگ پر چیئرمین سینیٹ نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ’’ایوان کو اعتماد میں لیں ہمارا مقصد اخباری خبریں سننا نہیں بلکہ ملک کے لیے قانون سازی کرنا ہے۔

رضا ربانی نے سیکورٹی صورتحال پر چیئرمین ان کیمرہ بریفنگ کی ہدایت کرتے ہوئے کل سینیٹ میں مزید تفصیلات فراہم کرنے کا حکم دیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں