The news is by your side.

دلہے نے شادی سے ساس کو ہی جانے کا کہہ دیا

شادی بیاہ کی تقریب میں دلہا اور دلہن کے بعد ان کے والدین ہی لوگوں کی توجہ کا مرکز ہوتے ہیں اور ہر کوئی والدین کو شادی کی مبارک باد دے رہا ہوتا ہے لیکن حیران کن طور پر دلہے نے دلہن کی والدہ کو ہی شادی سے جانے کا کہہ دیا۔

گزشتہ دنوں سوشل میڈیا پر ایک پوسٹ وائرل ہوئی جس میں دلہے نے ساس کی پرفیوم کی مہک سے تنگ آکر تقریب چھوڑنے کا کہہ دیا۔

ویب سائٹ ریڈٹ پر ایک صارف کی جانب سے کی گئی پوسٹ اس وقت وائرل ہوئی جس میں دلہے نے بتایا کہ ‘میں نے شادی کے روز ساس کو وینیو چھوڑ دینے کا کہا تھا کیونکہ ان کے پرفیوم کی خوشبو مجھے پریشان کر رہا تھا’۔

دلہے کے مطابق ‘اس پرفیوم کی وجہ سے میرا وہاں کھڑا رہنا دوبھر ہوگیا اسی لیے میں بیچ فوٹو سیشن سے چلا گیا جس پر میری دلہن نے اپنی والدہ کو مجھ سے دور رہنے کا مشورہ دیا’۔

پوسٹ میں بتایا گیا کہ ‘اس کے بعد بھی میرے سر میں درد برقرار رہا تو میں نے اپنی ساس سے کپڑے بدلنے کا کہا اور یہ بھی کہا کہ اگر وہ یہ نہیں کر سکتیں تو وینیو سے ہی چلی جائیں’۔

صارف نے لکھا کہ ’ہاں میری بیوی کو اس کا علم تھا میں نے اس سے پہلے بھی خریدے گئے پرفیوم پر بھی ایسا ہی ردعمل ظاہر کیا تھا اور یہ صرف تیسرا موقع تھا جب میں نے پرفیوم کے لیے برا ردِ عمل ظاہر کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں