The news is by your side.

خلیجی ملک میں ڈیلیوری رائیڈرز اور گاڑیوں کے قوانین میں ترمیم

کویت کے وزیر داخلہ نے ڈیلیوری کی سرگرمیوں سے متعلق کچھ قوانین میں ترمیم کا فیصلہ جاری کیا۔

عرب میڈیا رپورٹ کے مطابق کویت کے وزیر داخلہ شیخ طلال الخالد الصباح نے نقل و حمل ڈیلیوری کی سرگرمیوں سے متعلق کچھ قوانین میں ترمیم کا فیصلہ جاری کیا۔

وزیر داخلہ کے فیصلے کے مطابق ان کمپنیوں اور اداروں کو موٹرائزڈ گاڑیوں کے نئے لائسنسوں کا اجراء جو لاجسٹک خدمات فراہم کرتے ہیں انہین معطل کردیا جائے گا۔

یہ قوانین ان کمپنیوں اور اداروں کے لیے ہے جو فی الحال یہ سرگرمیاں انجام دے رہے ہیں وہ گاڑیوں کو نئی گاڑیوں سے تبدیل کر سکتے ہیں۔

وہ ادارے جن کے پاس اس فیصلے کے اجراء سے پہلے ہی محکمہ ٹریفک سے لائسنس منظوری ہو چکی ہے وہ اس سرگرمی پر عمل کر سکتے ہیں ساتھ ہی وہ شرائط اور کنٹرول کے مطابق نئی موٹرائزڈ گاڑیوں کو رجسٹر کر سکتے ہیں۔

قوانین کے مطابق گاڑیوں کی رجسٹریشن کے وقت گاڑی کا ماڈل تین سال سے زیادہ پرانا نہیں ہونا چاہیے اور ان کی تیاری کے سال کے سات سال بعد سروس سے باہر ہو جانا چاہیے۔

موٹرسائیکلوں کو رجسٹر کرتے وقت ایک سال سے زیادہ پرانا نہیں ہونا چاہیے، تمام گاڑیوں پر پیلے رنگ کی لائسنس پلیٹیں ہونی چاہئیں۔

گاڑی کا ڈرائیور کمپنی یا ادارے کی مخصوص شرٹ پہننے کا پابند ہے، جس کی وضاحتیں جنرل ٹریفک ڈیپارٹمنٹ کے ٹیکنیکل انسپکشن ڈیپارٹمنٹ کے ذریعے طے کی جاتی ہیں۔

موٹر سائیکلوں کے منسلک باکس پر لائٹس اور ریفلیکٹیو ٹیپس لگا ہونا چاہیے۔

قوانین کے مطابق موٹر سائیکلوں کے ڈرائیوروں کو ڈرائیونگ کے دوران ہیلمٹ پہننا لازم ہوگا اور یہ فاسفورسنٹ رنگ کا ہونا چاہیے جبکہ ہائی ویز اور رنگ روڈ پر موٹر سائیکل نہیں چلائی جا سکتی

Comments

یہ بھی پڑھیں