The news is by your side.

Advertisement

حکومت سندھ سرکاری سطح پر توبہ و استغفار کا اہتمام کرے: حافظ نعیم

کراچی: امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان نے سندھ حکومت کو مشورہ دیا ہے کہ سرکاری سطح پر توبہ و استغفار کا اہتمام بھی کیا جائے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق گزشتہ روز امیر جماعت اسلامی کراچی نے وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کو ایک خط لکھ کر کرونا وائرس سے نمٹنے کے لیے تعاون کی پیش کش کی ہے، نعیم الرحمان نے خط میں لکھا کہ جماعت اسلامی اور الخدمت کے رضا کار حکومت کے شانہ بشانہ چلنے کے لیے تیار ہیں۔

خط میں انھوں نے کہا کہ جماعت اسلامی حکومت سے توقع رکھتی ہے کہ روزانہ کمانے والے، دہاڑی دار مزدور اور فیکٹری کے ورکرز کے معاش کے حوالے سے بھی انتظام کرے گی۔

وزیراعلیٰ سندھ نے 3 ارب کا کرونا ریلیف فنڈ قائم کردیا

خط میں مشورہ دیا گیا کہ حکومت سندھ سرکاری سطح پر توبہ و استغفار کا بھی اہتمام کرے۔ امیر جماعت کراچی نے لکھا کہ کراچی سمیت صوبہ سندھ میں کرونا وائرس کی وجہ سے غیر معمولی صورت حال کے پیش نظر جماعت اسلامی مکمل تعاون کے لیے تیار ہے۔

خیال رہے کہ سندھ میں کرونا وائرس کے متاثرہ افراد کی تعداد 172 ہو چکی ہے، جن میں سے 18 افراد میں وائرس مقامی طور پر منتقل ہوا۔ صوبائی وزیر سعید غنی کا کہنا تھا کہ متاثرہ محنت کشوں کے لیے حکومت نے 3 ارب روپے کا فنڈ قائم کیا ہے، متاثرین کو فنڈز تین سماجی کارکنان کے ذریعے دیے جائیں گے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں