The news is by your side.

’جب تک بولر تباہ نہ ہو جائے اسے کھلاتے رہتے ہیں‘

پاکستان کے سابق فاسٹ بولر عاقب جاوید نے حارث رؤف کو فی الحال ٹیسٹ کرکٹ نہ کھیلنے کا مشورہ دے دیا۔

انگلینڈ کے خلاف پنڈی ٹیسٹ میں ڈیبیو کرنے والے حارث رؤف اسٹرین (کھچاؤ) کی وجہ سے بقیہ سیریز سے باہر ہو گئے ہیں۔ ڈاکٹرز نے انہیں مکمل آرام کا مشورہ دیا ہے۔

اس حوالے گفتگو کرتے ہوئے عاقب جاوید نے کہا کہ حارث کو ٹیسٹ نہیں کھیلنا چاہیے کیونکہ وہ اس فارمیٹ کے لیے ٹرینڈ یعنی تربیت یافتہ نہیں ہیں ان کی جگہ ایسے باؤلرز کو کھلائیں جو ٹیسٹ میچ، فرسٹ کلاس کرکٹ کھیل سکیں اور باقاعدگی سے وکٹیں حاصل کر سکیں۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس میرحمزہ ہے ایسے باؤلرز کو کھلائیں جو طویل عرصے تک باؤلنگ کر سکیں اور جانتے ہوں کہ کہاں اور کیسے بولنگ کرنی ہے۔

عاقب جاوید نے اظہارِبرہمی کرتے ہوئے کہا کہ ایک بار جب کسی بولر کو پکڑ لیتے ہیں چاہے وہ ٹی ٹوئنٹی، ون ڈے، یا ٹیسٹ میں ہو – وہ تب تک آرام نہیں کرتا جب تک کہ تباہ نہ ہوجائے۔

ان کا کہنا تھا کہ "پارٹ ٹائمرز” پر انحصار کرنا ایک ناقص حکمت عملی ہے اور ٹیم کو تجربہ کار باؤلرز پر سرمایہ کاری کرنی چاہیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں