The news is by your side.

Advertisement

آسٹریلیا کو قابو کیسے کریں؟ شعیب اختر کے قیمتی مشورے

سابق اسپیڈ اسٹار شعیب اختر نے ورلڈکپ سیمی فائنل میں آسٹریلیا کو زیر کرنے کے لیے قومی ٹیم کو قیمتی ‏مشورے دے دیے۔

نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے شعیب اختر نے کہا کہ پاکستان ٹیم 1999 ورلڈکپ کو نہ دہرائے وہ ‏نہ ہو جو اس وقت کے عالمی کپ میں ہوا کہ پورے ٹورنامنٹ میں اچھا کھیلنے کے بعد فائنل میں بکھر گئے۔

شعیب اختر نے کہا کہ ٹیم کو بالکل نہیں گھبرانا، دباؤ میں نہیں آنا یہ نہیں سوچنا کے سامنے حریف کون ہے بس ‏اپنا نارمل گیم کھیلنا ہے جو وہ ایونٹ میں کھیلتے آرہے ہیں۔

سابق اسپیڈ اسٹار نے کہا کہ پاکستان ٹاس جیتا تو آسٹریلیا کو بیٹنگ کہ دعوت دے کیونکہ کینگروز اسپنرز میں ‏پھنستے ہیں، قومی ٹیم کی اوپننگ جوڑی سب سے اہم ہے اگر 3 سے 4 اوورز میں کوئی وکٹ نہ گری تو آسٹریلیا ‏ہاتھ کھڑے کر دے گا۔

انہوں نے کہا کہ بابراعظم اور محمدرضوان پر بڑی ذمہ داری عائد ہوتی ہے جلد وکٹ نہیں دینی آرام سے اپنا گیم ‏کھیلنا ہے بیٹنگ لائن متوازی ہے مڈل آرڈر بلے باز بھی اچھے ہیں اور پھر پاور ہٹرز ہیں۔

شعیب اختر نے کہا کہ آسٹریلوی ٹیم حملہ کرتی ہے دباؤ میں لاتی ہے لیکن قومی پلیئرز کو گھبرانا نہیں ہے بالکل ‏محسوس نہیں ہونے نہیں دینا کہ حریف کون ہے، دباؤ میں نہیں آنا یہ نہ ہو کہ اچانک آپ بکھر جائیں جیسے ‏‏1999 کے ورلڈکپ میں ہوا تھا ایسی غلطی نہیں کرنی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں