The news is by your side.

Advertisement

پبلک ٹرانسپورٹ میں ایس او پی کے مطابق مسافر سفر کیسے کریں گے؟

لاہور: پنجاب حکومت نے انٹر سٹی ٹرانسپورٹ کھولنے کے لیے ایس او پیز تیار کر لیے، گزشتہ روز وزیر اعلیٰ عثمان بزدار نے پبلک ٹرانسپورٹ کو اجازت دینے کے سلسلے میں ایس او پیز مانگ لیے تھے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پنجاب میں لاک ڈاؤن میں نرمی کے بعد اب پبلک ٹرانسپورٹ کو بھی اجازت دینے کا اصولی فیصلہ کر لیا گیا ہے، جس کے لیے ایس او پیز بھی تیار کر لیے گئے۔

ایس او پیز کے مطابق دو سیٹوں پر ایک مسافر بیٹھ کر سفر کرے گا، ایک سے دوسرے مسافر میں 3 فٹ کا فاصلہ لازمی قرار دیا گیا ہے، بس میں سوار ہونے کے لیے اگلا اور اترنے کے لیے پچھلا دروازہ استعمال ہوگا۔

ایک دروازے والی بس میں مسافر پہلے اتریں گے پھر دوسرے سوار ہوں گے، ایک روٹ پر سفر مکمل ہونے کے بعد بس میں جراثیم کش اسپرے کیا جائے گا، بسوں میں اے سی کے استعمال سے اجتناب کیا جائے گا، بس عملہ مسافروں کو احتیاطی تدابیر اختیار کرانے کے ہر ممکن اقدامات کرے گا۔

پنجاب حکومت کا پبلک ٹرانسپورٹ چلانے کی اجازت دینے کا فیصلہ

پبلک ٹرانسپورٹ میں سوار ہر مسافر کے لیے فیس ماسک، ہینڈ سینی ٹائزر لازمی قرار دیا گیا ہے، بسوں اور منی بسوں سمیت ٹرمینلز پر ہینڈ سینی ٹائزر لازمی رکھے جائیں گے، کھانسی اور نزلہ زکام کی شکایت والے مسافروں کو سوار ہونے کی اجازت نہیں ہوگی، بسوں کی کھڑکیاں ہوا کے گزر کے لیے کھلی رکھی جائیں گی۔

شہر میں آن لائن ٹیکسی سروس کے لیے بھی ایس او پی جاری کیا گیا ہے، جس میں مسافروں کے لیے فیس ماسک اور ہینڈ سینی ٹائزر لازمی قرار دیا گیا ہے، ڈرائیور بھی گاڑیاں چلاتے وقت فیس ماسک کا استعمال کریں گے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں